انتخاباتتازہ ترینخبریںپاکستان سے

سندھ حکومت کا فیصلہ مسترد ، بلدیاتی الیکشن مقررہ وقت پر ہی ہوں گے : الیکشن کمیشن

الیکشن کمیشن نے سندھ حکومت کا فیصلہ مسترد کرتے ہوئے 15 جنوری کو ہی صوبے میں بلدیاتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ مکمل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

چیف الیکشن کمشنر کی سربراہی میں الیکشن کمیشن میں ہونے والے اجلاس میں کراچی اور حیدرآباد کے بلدیاتی انتخابات کے معاملے پر غور کیا گیا۔ سندھ حکومت کا 15 جنوری کو کراچی اور حیدرآباد میں بلدیاتی الیکشن ملتوی کرانے کا فیصلہ مسترد کردیا  گیا۔ سندھ میں بلدیاتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ 15 جنوری کو ہی مکمل کیا جائے گا۔

الیکشن کمیشن نے اس سلسلے میں وزارت داخلہ کو انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنز پر فوج اور رینجرز کی تعیناتی یقینی بنانے کی ہدایت کی ہے۔الیکشن کمیشن نے سندھ میں بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے سے متعلق اپنے فیصلے کا حکم نامہ بھی جاری کردیا جس میں کہا گیا ہےکہ سندھ حکومت کے نوٹی فیکشن ایس ایل جی اے قانون کی خلاف ورزی ہیں، صوبے میں دوسرے مرحلے کے انتخابات 15 جنوری کو ہوں گے، چیف سیکرٹری اور آئی جی سندھ سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کریں۔

الیکشن کمیشن نے سیکرٹری اور سپیشل سیکرٹری کو کراچی پہنچنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ کراچی، حیدرآباد اور ٹھٹھہ ڈویژن میں الیکشن کی تیاری مکمل ہے، بیلٹ پیپرز چھپ چکے ہیں اور  الیکشن مواد کی بلک بریکنگ ہو چکی ، پولنگ سٹاف کی تقرری ہو چکی،کمیشن  پولنگ کے لیے تیار ہے۔

الیکشن کمیشن نے کہا ہےکہ سندھ بلدیاتی قانون میں ہے کہ الیکشن شیڈول اعلان کے بعد حدود تبدیل نہیں ہو سکتی، پولنگ سے 2 روز قبل مقامی علاقوں کا نوٹیفکیشن واپس لینا آئین اور قانون کے منافی ہے، سندھ الیکشن کمشنر کے سروے کے مطابق دادو میں صورتحال پولنگ کے لیے سازگار ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button