تازہ ترینخبریںپاکستان سے

قومی سلامتی کمیٹی کا دہشت گردی کے خلاف کے جنگ جاری رکھنے کا عزم

قومی سلامتی کمیٹی نے پاکستان میں دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رکھنے کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔

وزیر اعظم کی زیر صدارت اجلاس کے اعلامیے کے مطابق دہشت گردی کیخلاف ریاست کی پوری طاقت سے نمٹا جائے گا۔ ملکی سلامتی پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جا سکتا۔ پاکستان کی سرزمین کے ایک ایک انچ پر ریاست کی مکمل رٹ برقرار رکھی جائے گی۔قومی سلامتی’ معاشی سلامتی کے گرد گھومتی ہے۔ معاشی آزادی کے بغیر ملکی خودمختاری یا وقار دباؤ میں آتا ہے۔ معیشت کو مضبوط بنانے کے لیے کمیٹی نے ٹھوس اقدامات کرنے پر اتفاق کیا۔

اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں بالخصوص سی ٹی ڈی کو مطلوبہ صلاحیتوں کے ساتھ جنگ کے معیار تک لایا جائے گا۔ کسی بھی ملک کو دہشت گردوں کو پناہ گاہیں اور سہولتیں فراہم کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ پاکستان اس سلسلے میں اپنے لوگوں کے تحفظ کے تمام حقوق محفوظ رکھتا ہے۔ قومی سلامتی کمیٹی نے ملک میں دہشتگردی کے خلاف زیرو ٹالرنس پالیسی کے عزم کا اعادہ کیا۔

قومی سلامتی کمیٹی نے کہا کہ پاکستان کی سلامتی پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جاسکتا، ملک کی سر زمین کے ایک ایک انچ پر ریاست کی مکمل رٹ برقرار رکھی جائے گی۔

اجلاس میں وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ دہشتگردی کے خلاف جنگ کی قیادت وفاقی اور صوبائی حکومتیں نیشنل ایکشن پلان کے مطابق کریں گی، سماجی و اقتصادی ترقی کو ترجیح دی جائے گی۔اجلاس میں کم اور متوسط آمدنی والے طبقے کو درپیش چیلنجز کا جائزہ لیا گیا، وزیر خزانہ نے کمیٹی کو حکومت کے معاشی استحکام کے روڈ میپ کے بارے میں بریف کیا۔

اعلامیہ کے مطابق کمیٹی کو مجموعی سیکیورٹی صورتحال سمیت خیبرپختونخوا اور بلوچستان میں دہشتگردی کے حالیہ واقعات پر بریف کیا گیا۔وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے نے بین الاقوامی مالیاتی اداروں کے ساتھ بات چیت کی صورتحال پر بھی بریف کیا

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button