22 جون 2018
news title here

سابق وزیر داخلہ چودھری نثار نے کہا ہے کہ ن لیگ سے کوئی بات چیت نہیں چل رہی اور اگر مجھے اقتدار عزیز ہوتا معافی مانگ لیتا اور تھوکا ہوا چاٹ لیتا۔ اسلام آباد میں  آج سے دس دن پہلے غلط خبر بنی اس میں کوئی حوالہ نہیں تھا کہ میں نے یہ بات کہاں کی؟ کہا گیا میں نے کہا ہے پی ٹی آئی میں دس غلطیاں ہیں تو  ن لیگ میں سو غلطیاں ہیں، کہا گیا میں زبان کھولوں گا تو میاں صاحبان منہ دکھانے کے قابل نہیں ہوں گے، میں نے فوری طور پر اس کی تردید کی، زبان کھولی تو منہ دکھانے قابل نہیں ہوں گے، یہ میرا طرز کلام اور طرز سیاست نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ چکری کی تقریر کو بنیاد بناکر طرح طرح کی باتیں کی گئیں، یہ ضرور کہا میرا ارادہ تھا کہ اپنی افتتاحی پبلک میٹنگ میں وضاحت کروں گا جو نوازشریف کے ساتھ میرے اختلافات پچھلے ایک سال سے جاری و ساری ہیں اور وہ کیا وجوہات ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نوازشریف کے ساتھ اختلافات کس نوعیت کے ہیں ان کی وضاحت ضرور کروں گا لیکن کلثوم نواز کی علالت کی وجہ سے فیصلہ کیا ہے کہ جب تک ان کی صحت ٹھیک نہیں ہوجاتی اس پر بات نہیں کروں گا ، ضرور بتائوں گا آزاد الیکشن کیوں لڑرہا ہوں، یہ سب سیاسی اختلافات ہیں، کسی ذاتی اختلافات کی بات نہیں کر رہا۔ انہوں نے کہا کہ میری سیٹ ایڈجسٹمنٹ کی غلط خبر آئی، مجھے کوئی لالچ نہیں اور نہ کسی کی طرف دیکھ رہا ہوں، حلقے کے عوام اور اللہ کے سامنے دیکھ رہا ہوں، 25 جولائی کو سب سامنے ہوگا کہ عوام کا فیصلہ کیا ہے ، نوازشریف کو 34 سال سے دل سے مشورہ دیا، نواز شریف اور پارٹی کے لوگوں کو کہا کہ میرے معیار میں وفاداری یہ نہیں ہاتھ باندھ کر لیڈر کی ہاں میں ہاں ملائو ، یہ منافقت ہے اور لیڈر کے ساتھ دشمنی ہے، اصل ایمانداری وفاداری یہ ہے کہ جو سمجھتے ہوں حقائق یہ ہیں وہ سامنے رکھو اور میں نے یہی کیا ، میں نے کوئی تماشہ نہیں لگانا، کسی کی تضحیک نہیں کرنی، حقائق اور دلائل سامنے رکھنا ہیں، ن لیگ کی بات نہیں کر رہا بلکہ نواز شریف کی کر رہا ہوں، میرا دل مطمئن ہے، جب سمجھا کہ اختلافات ایک ڈگر سے آگے بڑھ گئے تو میں ایک طرف ہوکر نہیں بیٹھا، اپنے آپ کو وزارت سے علیحدہ کر دیا، جو کہتے ہیں چودھری نثار نے بس چھوڑ دی ان پر ہنسی آتی ہے، میں کسی آوارہ بس کا مسافر نہیں اور دائیں بائیں کسی بس کی طرف نہیں دیکھتا ، کون سی قانون سازی ہے جہاں میں نے حکومت کا ساتھ نہیں دیا، نوازشریف کی صدارت کے حوالے سے بل آیا جو میرے ضمیر پر بوجھ تھا لیکن پھر بھی ووٹ دیا اور پارٹی سے وفاداری دکھائی، میں کوئی ناراض نہیں ہوں، میں نے اختلاف کیا ہے اور یہ اختلاف نوازشریف کے فائدے میں ہے، اگر اظہار اختلاف یا آزادی رائے پارٹی میں بغاوت ہے تو جو کوئی سمجھ لے میں بغاوت نہیں سمجھتا ، ن لیگ کو نقصان پہنچانے کا سوچ بھی نہیں سکتا، ایک ایک اینٹ نواز شریف کے ساتھ مل کر ہم نے رکھی، جب نوازشریف نے شیخ مجیب کو محب وطن کہا تو نہیں بولا، سینیٹ الیکشن کی بندر بانٹ ہوئی نہیں بولا، ممبئی حملوں پر بیان آیا بہت سوچ بچار کیا، ایک ایک لفظ پاکستان کا ریکارڈ درست کرنے کیلئے بیان دیا، بہت ساری سیاسی باتیں کر سکتا تھا لیکن نہیں کیا ، اگر اقتدار عزیز ہوتا تو معافی مانگ لیتا اور تھوکا ہوا چاٹ لیتا، اگر ٹکٹ کی خواہش ہوتی تو عمران خان نے اتنے بیان دیئے، شہباز شریف کے اس بیان کا بھی نوٹس نہیں لیا جو انہوں نے کہا کہ چودھری نثار مانگے یا نہ مانگے ہم ٹکٹ دیں گے، مجھے کوئی پروا نہیں۔ زعیم قادری سے متعلق سوال پر انہوں نے کہا کہ میں اپنے طریقے سے سیاست کرتا ہوں اس لئے کسی سے مماثلت نہ کی جائے، مجھے کوئی دنگا فساد نہیں کرتا جب کہ میری پارٹی سے بھی کوئی بات نہیں چل رہی ، جو رپورٹ ڈان کے رپورٹر کو دی گئی ، میٹنگ میں ایسی کوئی بات نہیں تھی یہ ایک خود ساختہ خبر تھی جسے لیک کیا گیا۔

news title here
news title here
news title here
 پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا کہ انتخابی ٹکٹ صرف اس کو دے رہے ہیں جو الیکشن لڑنا جانتا ہے۔ انتخابی ٹکٹوں کی تقسیم کے معاملے پر بنی گالہ میں دھرنے پر بیٹھے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ انصاف کے لیے 126 دن ڈی چوک میں دھرنا دیا لیکن اس سے بھی مشکل کام ٹکٹوں کی تقسیم ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ساڑھے 4 ہزار لوگوں نے ٹکٹ کے لیے اپلائی کیا تھا، ہم نے امیدواروں کو ٹکٹ دیے، لوگوں نے اعتراض کیا جس پر ہم نے نظر ثانی کی۔ انہوں نے کہا کہ ٹکٹوں کی تقسیم پر اعتراض آپ لوگوں کا حق تھا، آپ لوگوں کو یقین دلاتا ہوں کہ تین روز میں ٹکٹوں کی تقسیم کا جائزہ لے کر فیصلہ کروں گا، کسی کے ساتھ نا انصافی نہ ہو جائے اس لیے اللہ سے ڈرتا ہوں۔ چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ زیادہ تر حلقوں میں واضح تھا کہ ٹکٹ کس کو ملنا چاہیے اس لیے ٹکٹ ان امیدواروں کو جاری کیے جو الیکشن لڑنا جانتے ہیں، الیکشن جیتنے کے لیے لڑ رہے ہیں کیونکہ جیتیں گے تو ملک میں تبدیلی لے کر آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کے کسی بھی رشتہ دار یا دوست کو ٹکٹ نہیں ملا۔ انہوں نے کہا کہ سب سے مشکل کام خواتین کو ٹکٹ دینا ہے، ن لیگ میں کوئی میرٹ نہیں ہے، وہاں پر جن خواتین کو ٹکٹ ملے ان میں سے کوئی کسی کی بیوی ہے، کوئی خالہ ہے تو کوئی کسی کی بہن ہے۔  
news title here
 پاکستان تحریک انصاف کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی اور سابق جنرل سیکریٹری جہانگیر ترین کے درمیان سرد جنگ شدت اختیار کر گئی، پارٹی کے دونوں سینئر رہنماؤں کی جانب سے ایک دوسرے پر سنگین الزامات  بھی لگائے گئے۔ ملتان میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی کا جہانگیر ترین کے ساتھ سرد جنگ سے متعلق سوال پر کہنا تھا کہ جہانگیر ترین سے کوئی مقابلہ نہیں ہے، مقابلہ سیاست میں ہوتا ہے، جو شخص الیکشن نہیں لڑ سکتا اور کسی گیم میں شامل ہی نہیں اس سے مقابلہ بنتا ہی نہیں ہے۔ انہوں کہ کیا پاگل ہوں جو جہانگیر ترین سے مقابلہ کروں گا، بنی گالہ کے باہر احتجاج کارکنوں کا حق ہے لیکن بتایا جائے کہ سکندر بوسن کو کون سپورٹ کر رہا ہے؟ کون ہے جو کارکنوں کو احتجاج پر اکسا رہا ہے ؟ اتنی اخلاقی جرات ہے تو سامنے آنا چاہیے۔ وہاڑی پی ٹی آئی رہنما نذیر جٹ کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ انہیں پارٹی میں اسحاق خاکوانی لے کر آئے لیکن عائشہ جٹ کو صوبائی ٹکٹ کس نے دلوایا؟ انہیں ضمنی الیکشن کس نے لڑوایا؟ انہوں نے کہا کہ میں تو عائشہ جٹ کے ضمنی الیکشن میں بھی موجود نہیں تھا لیکن نذیر جٹ نے اگر بات کی ہے تو اپنے بل بوتے پر کی ہے، ان کی اپنی ایک سوچ، سیاسی حیثیت اور ایک نام ہے، میری اس میں کوئی شرارت نہیں ہے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ نہ بدنیت ہوں، نہ شرارتوں کا عادی ہوں اور نہ ہی سازشی مزاج کا بندہ ہوں، میرا ایمان ہے کہ اللہ دلوں کے راز جانتا اور حقائق پہچانتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں آپ سے فریب کر سکتا ہوں لیکن کیا اللہ سے بھی کر سکتا ہوں؟ کیا میں اللہ سے جعلسازی کر سکتا ہوں؟ میں جعلسازی نہیں کر سکتا کیونکہ اللہ نیتوں کے حال جانتا ہے۔  انہوں نے کہا کہ مجھے کسی پر اعتراض نہیں، میں اپنے کسی رشتہ دار کو اپنے نظریے پر فوقیت نہیں دوں گا۔  وائس چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ میں نے اصول کی سیاست کی ہے، وزارت خارجہ اور قومی اسمبلی کی نشست نظریے کا سودا کرنے کے لیے نہیں ٹھکرائی۔ انہوں نے کہا کہ حق مانگنا ہر کسی کا حق اور فیصلہ کرنا پارٹی کا حق ہے، پارٹی فیصلہ کرے گی، عمران خان فیصلہ کریں گے خوا وہ میرے عزیز کے حق میں ہو یا خلاف۔ انہوں نے کہا کہ درخواست دینا، دلائل دینا ہر کسی کا حق ہے لیکن فیصلہ تسلیم کرنا پارٹی کا ڈسپلن ہے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ عمران خان کو وزیر اعظم بنانے کے لیے قربانی اور ایثار کا جذبہ ہونا چاہیے، خان صاحب کو وزیراعظم بنانے کے لیے خود کو قربانی کے لیے پیش کرنے کو تیار ہوں۔ انہوں نے عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ میرے لیے اس وقت سب سے مقدم چیز نیا پاکستان کا وژن اور آپ کی کامیابی ہے، خان صاحب، آپ خالصتاً میرٹ پر فیصلے کریں، میری طرف سے کوئی دباؤ اور لالچ نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان جو بھی فیصلے کریں گے اس پر آمین کہوں گا۔  شاہ محمود قریشی کی پریس کانفرنس کے حوالے سے لودھراں میں میڈیا نمائندوں سے بات کرتے ہوئے جہانگیر ترین نے کہا کہ کسی کے خلاف بات کرنا پسند نہیں کرتا، شاہ محمود قریشی کی پریس کانفرنس دیکھ کر جواب دوں گا لیکن جواب دینے کے قابل کوئی چیز بھی ہو۔  انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف میں بطور عام کارکن کام کر رہا ہوں اور کرتا رہوں گا، پارٹی کے ساتھ ایسے ہی کھڑا ہوں جیسے پہلے کھڑا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ٹکٹوں کے لیے کوئی دھرنا دینا چاہے تو اس کی مرضی ہے، میرا کوئی ذاتی مفاد نہیں ہے، اصول کی سیاست کرتا رہوں گا۔ انہوں نے کہا کہ شاہ محمود قریشی اپنے ضلع اور شہر کے لوگوں کے ساتھ بیٹھ کر منصفانہ طریقے سے معاملات حل کریں کیونکہ دوسروں پر الزام لگانے سے بہتر تحفظات دور کرنا ہے۔ پی ٹی آئی رہنما نے کہا کہ شاہ محمود قریشی دوسروں پر الزامات لگانے کے بجائے عون چوہدری جیسے کارکنوں کے تحفظات دور کریں۔ جہانگیر ترین نے کہا کہ پی ٹی آئی میں نہ کوئی عہدہ مل سکتا ہے نہ میں کوشش کر رہا ہوں، عمران خان کو وزیراعظم بنانے اور تحریک انصاف کو برسراقتدار لانے کے لیے جو ہو سکا کروں گا۔ انہوں نے کہا کہ دھرنے کی سیاست پی ٹی آئی نے شروع کی تھی، اب ہمیں دھرنوں پر برا نہیں ماننا چاہیے، ٹکٹوں کے بارے میں ضروری ہے کہ منصفانہ فیصلے کیے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی نے زیادہ تر تشستوں پر اچھے امیدوار کھڑے کیے، میں ان میں سے نہیں جو پارٹی کے معاملات میڈیا پر اچھالے، میں باہر آ کر بھڑکیں نہیں مارتا، پارٹی کے اندر بات کرتا ہوں۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے سرچ آپریشن کی آڑ میں مزید 5 نوجوانوں کو شہید جب کہ درجنوں کو زخمی کردیا ۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق ضلع اسلام آباد کے علاقے سری گفوارا میں قابض بھارتی فوج نے سرچ آپریشن اور گھرگھر تلاشی کے نام ایک پر مکان پر فائرنگ کردی ، جس کے باعث مالک مکان یوسف اور ان کی اہلیہ حفیظہ بیگم شدید زخمی ہوگئے، دونوں کو قریبی ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں محمد یوسف دم توڑ گئے جب کہ حفیظہ بیگم کو سری نگر منتقل کردیا گیا۔ اسلام آباد میں ہی فائرنگ کے ایک واقعے میں کٹھ پتلی پولیس کا ایک اہلکار ہلاک جب کہ دو زخمی ہوگئے جس کے بعد بھارتی فوج نے ایک اور مکان کو تباہ اور 4 دیگر نوجوانوں کو شہید کردیا۔ علاقے میں قابض بھارتی فوج اور دیگر اداروں کی جانب سے جاری سرچ آپریشن کے نام پر بڑے پیمانے پر چادر اور چار دیواری کے تقدس کی پامالی اور نوجوانوں کی شہادت کے خلاف مظاہرین سڑکوں پر آگئے۔ قابض فوجی اہلکاروں نے نہتے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے ان پر آنسو گیس کے شیل، ربڑ کی گولیاں اور چھرے برسائے۔ جس سے درجنوں افراد زخمی ہوگئے۔ دوسری جانب کٹھ پتلی انتظامیہ نے سری گفوارا کی کشیدہ صورت حال سے متعلق خبریں وادی کے دیگر علاقوں میں پہنچنے سے روکنے کے لیے موبائل فون اور انٹر نیٹ سروس بھی معطل کردی ہے۔

news title here
news title here
news title here
news title here
news title here
پاکستانی ڈراموں کے  ساتھ بالی وڈ فلم موم میں بھی شاندار اداکاری کے جوہر دکھانے والے نامور اداکار عدنان صدیقی بانسری بجانے میں بھی ماہر نکلے جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی ۔ عدنان صدیقی نے اس بار عید الفطر ملک سے باہر کینیڈا کے شہر مسی ساگا میں منائی، جہاں انہوں نے حلال فوڈ فیسٹول میں شرکت کی۔ 17 جون کو انہوں نے اپنے تمام مداحوں کے لئے عید کے تحفے کے طور پر انسٹاگرام پر ایک ویڈیو شیئر کی تھی، جس میں وہ بانسری پر گلوکار عاطف اسلم کے مشہور گانے دل دیاں گلاں کی دھن بجاتے نظر آئے۔ یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر تیزی سے شیئر ہونے کے بعد اب وائرل ہوگئی اور ہر طرف عدنان صدیقی کی بانسری کے چرچے ہیں۔ عاطف اسلم کی آواز میں گایا گیا یہ گانا دل دیاں گلاں سلمان خان اور کترینہ کیف کی گزشتہ برس ریلیز ہونے والی بالی وڈ فلم ٹائیگر زندہ ہے میں شامل ہے، جو مداحوں میں بہت مقبول ہے۔ واضح رہے کہ کینیڈا کے شہر  مسی ساگا میں منعقد  حلال فوڈ فیسٹول میں عدنان صدیقی کے ساتھ ساتھ عثمان خالد بٹ، حریم فاروق اور شہزاد رائے نے بھی شرکت کی تھی۔
news title here
بالی وڈ کے چاکلیٹی ہیرو رنبیر کپور نے ہدایت کار راج کمار ہیرانی کی کامیاب فلم تھری ایڈیٹس  کے سیکوئل میں کام کرنے کی خواہش ظاہر کردی۔ بالی وڈ کی تاریخ میں کئی فلمیں ایسی ہیں جو لوگوں کو ذہنوں میں آج بھی تازہ ہیں جسے متعدد بار دیکھنے کے بعد دل نہیں بھرتا اور ان میں سے بالی وڈ کے مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان کی 2009 میں ریلیز ہونے والی مشہور فلم تھری ایڈیٹس ہے جس نے سماجی مسائل کو اجاگر کرنے کے  ساتھ ریکارڈ بک بھی الٹ پلٹ کردی تھی۔ بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق نامور ہدایت کار راجکمار ہیرانی نے چند روز قبل تھری ایڈیٹس کے  سیکوئل بنانے کی اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ انہوں نے مصنف ابھیجت کے ساتھ ملکر فلم کی کہانی لکھنا شروع کردی ہے مگر اس پر ابھی بہت وقت لگے گا۔ دوسری جانب راجکمار ہیرانی کے بیان کے بعد رنبیر کپور نے بھی فلم کا حصہ بننے کی خواہش ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ میں وہ سب کچھ آنکھیں بند کرکے کروں گا جو راجکمار ہیرانی مجھ سے کروانہ چاہیں گے، حتیٰ کہ مجھے کسی سیکوئل کی پروا نہیں وہ کوئی بھی فلم بنانا چاہیں میں خوشی سے اس فلم کا حصہ بننا پسند کروں گا۔ واضح رہے ان دنوں رنبیر کپور راجکمار ہیرانی کی ہدایتکاری میں بننے والی سنجے دت کی زندگی پر مبنی فلم سنجو کی تشہرکاری میں مصروف ہیں جوکہ رواں سال 29 جون کو سنیما گھروں کی زینت بنے گی۔
news title here
news title here

روس کے شہر سینٹ پیٹرز برگ میں کھیلے گئے میچ میں دونوں ٹیموں کے مابین کانٹے دار مقابلہ ہوا، دونوں ٹیموں کے کھلاڑی بھرپور کوششوں کے باوجود مقررہ وقت میں کوئی گول کرنے میں کامیاب نہ ہو سکے، مقابلہ بغیر کسی گول کے برابر ہونے کے بعد اضافی وقت میں برازیلی ٹیم نے 2 گول داغتے ہوئے مقابلہ اپنے نام کرلیا، اضافی وقت میں پہلے فلیپی کوٹنہو نے گول کرتے ہوئے ٹیم کو برتری دلائی جب کہ بعد ازاں نیمار نے مزید ایک گول کرتے ہوئے ٹیم کو 0-2 سے فتح دلوائی۔واضح رہے کہ برازیل کا میگا ایونٹ میں پہلا میچ سوئٹرز لینڈ کے خلاف تھا جو 1-1 گول سے برابر رہا تھا، اب دوسرے راﺅنڈ میں رسائی کے لیے برازیلی ٹیم کو سربیا کے خلاف لازمی فتح درکار ہوگی۔

news title here

 احمد شہزاد پر ماری جوانا استعمال کرنے کا الزام سامنے آگیا۔ احمد شہزاد کا ڈوپ ٹیسٹ ایک ڈومیسٹک میچ کے دوران لیا گیا تھا جو مثبت آنے پر اوپنر کو تادیبی کارروائی کا سامنا ہے، پی سی بی نے کہا ہے کہ ایک کھلاڑی کا ڈوپ ٹیسٹ مثبت آیا تھا لیکن نام رپورٹ سامنے آنے کے بعد بتایا جائے گا۔ ذرائع سے تصدیق ہوچکی کہ گرفت میں آنے والے کرکٹر احمد شہزاد ہی ہیں، یہ اطلاعات بھی گردش میں ہیں کہ انہوں نے مبینہ طور پر ماری جوانا کا استعمال کیا تھا، ممنوعہ دوا یا نشہ آور اشیا کے استعمال پر حتمی بیان کرکٹ بورڈ کو جاری کرنا ہے، احمد شہزاد کو وضاحت کا موقع بھی دیا جائے گا اور اگر الزام ثابت ہوگیا تو انہیں 3ماہ تک کرکٹ سے دور رہنا ہوگا۔ دوسری طرف پاکستان کو یکم سے 8جولائی تک زمبابوے میں شیڈول سہ ملکی ٹی ٹوینٹی سیریز میں شرکت کرنا ہے، گزشتہ دونوں ایک انٹرویو میں ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے آئوٹ آف فارم ہونے کے باوجود احمد شہزاد کو مزید مواقع دینے کا عندیہ دیا تھا لیکن موجودہ صورتحال میں ان کا ٹیم کے ہمراہ جانا مشکل نظر آرہا ہے۔ ذرائع نے کہا ہے کہ گزشتہ روز ہیڈ کوچ کی چیف سلیکٹر انضمام الحق کے ساتھ میٹنگ میں احمد شہزاد کا معاملہ بھی زیر غور آیا، ڈسپلن کے حوالے سے انتہائی سخت رویہ رکھنے والے مکی آرتھر ایک بگڑے بچے عمر اکمل کی چھٹی کرا چکے، اس لئے احمد شہزاد کو بھی ڈراپ کئے جانے کا امکان روشن ہوگیا ، ان کی جگہ شان مسعود کو شامل کئے جانے کا امکان ہے۔ ویسٹ انڈیز سے کراچی میں ٹی ٹوینٹی سیریز کے تینوں میچز میں فخر زمان کے ساتھ بابر اعظم نے اننگز کا آغاز کیا اور کامیاب بھی رہے لیکن بازو میں فریکچر کی وجہ سے ان کی ٹرائنگولر سیریز میں شرکت مشکوک ہے۔

news title here

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی نے کہا ہے کہ پاکستان سپر لیگ کی وجہ سے پاکستان کرکٹ بہتر ہوئی۔ کراچی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے  انہوں  نے کہا کہ پاکستان سپر لیگ کی وجہ سے پاکستان کرکٹ بہتر ہوئی اور قومی ٹیم کی پرفارمنس میں بھی نمایاں فرق آیا ۔ کھلاڑیوں کو اعتماد دیا جائے تو وہ بہترین پرفارمر ثابت ہوتے ہیں۔ شاہد آفریدی نے کہا کہ پاکستان میں کھیلوں کے معیار میں مزید بہتری لانے کی ضرورت ہے، سپر باکسنگ لیگ سے ہمارے باکسروں کی مالی حالت بھی پہلے سے بہت بہتر ہوجائے گی۔

news title here

عالمی شہرت یافتہ پاکستانی نڑاد برطانوی باکسر عامر خان نے کہا ہے کہ پاکستان میں کرکٹ کو بہت مقبولیت حاصل اور باکسنگ کا کھیل  آج بھی غیر معروف ہے۔عامر خان نے کہا کہ میری خواہش ہے کہ پاکستان میں باکسنگ کا نیا ٹیلنٹ سامنے  آئے جو عالمی سطح پر ملک کا نام روشن کرے، پہلی سپر باکسنگ لیگ 28 ستمبر سے اسلام  آباد میں شروع ہوگی، اس موقع پر سپر باکسنگ لیگ میں شریک ٹیموں کے مالکان، شاہد خان آفریدی،، راحت فتح علی خان، باکسرز اور دیگر متعلقہ افراد کی کثیر تعداد میں موجود تھی۔اس موقع پر ٹیموں کی کٹ کی رونمائی بھی کی گئی جبکہ راحت فتح علی خان نے لیگ کے حوالے سے گیت بھی پیش کیا۔ شاہد  آفریدی کی ٹیم پختون واریئرز کے نام سے اس لیگ کا حصہ ہوگی جس کے وہ اونر ہونگے جبکہ وسیم اکرم ملتان نوابز کے ساتھ ہیں۔ لاہور ریمز کے اونر علی شیخ، کراچی کوبراز کے فہد مصطفی اور سلمان اقبال، سیالکوٹ شیرز کے اونر جہانگیر ریاض،، فیصل  آبادفیلکنز کے اونر راحت فتح علی خان اور سلمان ہونگے۔عامر خان نے کہا کہ دنیا بھر میں کھلاڑیوں اور ایتھلیٹس کے لیے جم اور فٹنس سینٹر قائم ہیں تاہم بد قسمتی سے پاکستان میں یہ سہولیات  آج بھی بہت کم ہیں، میری تمام تر توجہ باکسنگ کی جانب ہے کہ میں پاکستان سے باصلاحیت باکسر سامنے لاؤں،یہ لیگ بھی اسی کوشش کا حصہ ہے۔ میں پاکستان کو بہت کچھ دینا چاہتا ہوں کیونکہ میں جانتا ہوں یہاں بہت ٹیلنٹ ہے۔محمد وسیم اور حسین شاہ امیچر سے پروفیشنل باکسنگ میں گئے اور نام بنایا۔ایک سوال پر انھوں نے کہا کہ پاکستان باکسنگ فیڈریشن  آئباکے ساتھ چلتی ہے ہم پاکستان میں پروفیشنل باکسنگ لا رہے ہیں اس لیے ہمارا پاکستان باکسنگ فیڈریشن سے کوئی جھگڑا نہیں ہے، ورلڈ باکسنگ کونسل ہی دنیا بھر میں باکسنگ کا سب سے بڑا ادارہ ہے۔عامر خان نے کہاکہ پہلی باکسنگ لیگ 28 ستمبر سے اسلام  آبادمیں ہوگی جس میں مردوں کے ساتھ ساتھ خواتین باکسرز بھی شرکت کریں گی، 8 ٹیموں کی96 باکسرز شرکت کریں گے لیگ کی ہر ٹیم میں10مرد اور دو خواتین باکسرز ہونگی، مجھے امید ہے کہ باکسنگ لیگ پاکستان باکسنگ کے لیے بہترین ثابت ہوگی، بھارت میں اس کا کامیاب انعقاد کیا جا چکا ہے، میں محمد وسیم سے بھی کہوں گا کہ وہ بھی اس لیگ کا حصہ بنیں۔۔

news title here
news title here
 ایک بھارتی ایئرلائن نے مسافروں کو 4 گھنٹے سے زائد تک انتظار کروانے کے بعد طیارے سے اترنے کا حکم دے دیا اور جب مسافر نہیں اترے تو جہاز کا اے سی فل کردیا، جس کے باعث طیارے میں دھند جیسی صورتحال پیدا ہوگئی، جس سے کئی مسافروں کی طبیعت خراب ہوگئی۔ مذکورہ پرواز میں 168 مسافر سوار تھے۔ طیارے میں سوار ایک مسافر دیپانکار رائے نے بتایا کہ عملے کا رویہ انتہائی غیر پیشہ ورانہ اور خراب تھا۔ ان کا کہنا تھا، لائٹ نے صبح 9 بجے روانہ ہونا تھا لیکن وہ آدھا گھنٹہ تاخیر کا شکار ہوئی، بورڈنگ کے بعد ہمیں ڈیڑھ گھنٹے تک طیارے میں بھوکا پیاسا بٹھایا گیا، جس کے بعد پائلٹ نے تمام مسافروں کو ہدایت کی کہ وہ جہاز سے نیچے اتر جائیں اور اس کی کوئی وجہ بھی نہیں بتائی گئی،جب شدید بارش کی وجہ سے مسافروں نے جہاز سے اترنے سے انکار کیا تو کپتان نے اے سی کو فل کرکے چلا دیا، دوسری طرف رابطہ کرنے پر ایئر لائن  انتظامیہ نے اس بات کو تسلیم کیا کہ فلائٹ ساڑھے 4 گھنٹے تک تکنیکی وجوہات کی بنائ پر تاخیر کا شکار ہوئی، تاہم اے سی کے حوالے سے کہا گیا کہ یہ معمول کی بات تھی اور مرطوب صورتحال میں اِسی طرح کیا جاتا ہے۔ ایئرلائن نے یہ دعویٰ بھی کیا کہ مسافروں کو ریفریشمنٹ فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ متبادل انتظامات بھی کیے گئے۔ تاہم اس حوالے سے دیپانکار رائے نے بتایا کہ انتظامیہ نے مسافروں کو جہاز سے اتارنے کے بعد کہا کہ وہ ایئرپورٹ کے فوڈ کورٹ میں چلے جائیں اور وہاں کھانا حاصل کرنے کے لیے اپنے بورڈنگ پاسز دکھائیں'لیکن جب ہم وہاں پہنچے تو فوڈ کورٹ والوں نے ہمیں کھانا دینے سے انکار کردیا اور جب ہم دوبارہ فلائٹ میں سوار ہوئے تو ایئرلائن انتظامیہ نے ہمیں سینڈوچ اور ایک  پانی کی بوتل فراہم کی، یہ رویہ ناقابل قبول ہے۔

news title here
 یوٹیوب پر مقبول ہونے والی ویڈیوز میں اکثر نئی معلومات، گفتگو، طنز و مزاح یا فلمی دنیا کی افواہیں اور خبریں ہوتی ہیں لیکن جنوبی کوریا کے ایک یوٹیوبر نے کئی گھنٹوں تک بہت پرسکون ماحول میں اپنے پڑھنے کی ویڈیو اپ لوڈ کی ہیں جس میں اس نے ایک لفظ بھی نہیں بولا اور اس کے باوجود ویڈیوز دیکھنے والوں کی تعداد لاکھوں میں ہیں اور اس چینل کے سبسکرائبر کی تعداد اب 3 لاکھ 30 ہزار صارفین سے تجاوز کر چکی ہے۔ جنوبی کوریا کے اس محنتی طالبعلم کی ویڈیو کا دورانیہ سات گھنٹے تک طویل ہے جس میں انہیں نوٹس لیتے، لکھتے اور پڑھتے ہوئے دکھایا گیا ۔ اس کے علاوہ وہ اپنے تعلیمی مشاغل کی لائیو ویڈیو بھی سٹریم کرتے ہیں اور ہزاروں لوگ اسے براہ راست دیکھ کر اس پر تبصرہ بھی کرتے رہتے ہیں۔ اس ویڈیو کا کوریائی نام بوٹ نو جیم رکھا گیا ، جس کے مطلب ہے کہ یہ ایک روبوٹ جسے تفریح میسر نہیں ہے۔ یہ طالبعلم جنوبی کوریا میں روز بروز مقبول ہورہا ہے اور اس کی ویڈیو کا ایک ہی عنوان ہوتا ہے،  میرے ساتھ پڑھو۔ ان میں سے ایک ویڈیو کم سے کم چھ گھنٹے طویل ہے۔ طالبعلم کی پہلی ویڈیو ایک سال پہلے منظر عام پر آئی تھی اور اس نے براہ راست ویڈیو گزشتہ ماہ سے نشر کرنا شروع کی ہیں۔ یہ طالبعلم پولیس افسر بننے کے امتحانات کی تیاری کر رہا ہے اور مکمل خاموشی میں توجہ سے پڑھتا دکھائی دیتا ہے۔ حیرت انگیز بات یہ ہے کہ اس کے چہرے کے تاثرات بہت کم نمایاں ہیں اور یہ بہت ہی کم حرکت کرتا ہے۔ اس نوجوان نے اپنے ویڈیو بلاگز بھی پوسٹ کئے ہیں جن میں اسے باہر جاتے، کھانا کھاتے اور ورزش کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔ اس کے ٹویٹر اکائونٹ کے بھی 4200 فالوورز ہیں۔

news title here
news title here
news title here
news title here
news title here
news title here
news title here
تربوز انسانی جسم کے درجہ حرارت کو معمول پر رکھنے میں معاون ثابت ہوتا ہے۔ جس میں وٹامن اے اور سی کثرت سے پائے جاتے ہیں۔ ماہرین صحت نے کہا ہے کہ گرمیوں کا پھل تربوز انسان کیلئے انتہائی مفید ہے، جو انسانی جسم میں نمکیات کی کمی دور کرنے کے علاوہ پوٹاشیم سے لبریز ہوتا ہے۔ تربوز انسانی جسم کو تندرست اور چاقو چوبند رکھنے میں بھی مدد دیتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ تربوز میں موجود وٹامن بی 6-کی وافر مقدار ہوتی ہے ۔ جو دماغ کی تقویت اور قوت حافظہ بڑھاتی ہے اسکے علاوہ تربوز میں موجود 91.5فیصد پانی انسانی جسم کی پانی کی ضروریات کو پورا کرنے کے ساتھ بینائی کے لئے بھی انتہائی مفید ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تربوز کے کئی دیگر طبی خواص بھی ہیں جن میں پٹھوں کے درد سے آرام اور وزن کی کمی کے علاوہ جلد کے کینسر سے تحفظ سمیت کئی دیگر خواص بھی شامل ہیں۔
news title here
 پاکستان میں تخم ملنگا جیسی قدرتی نعمت کو بری طرح نظر انداز کیا جاتا ہے جو صحت کا ایک خزانہ ہونے کی بنا پر طبی فوائد سے بھرپور ہے۔ صرف شربت اور فالودہ بناتے وقت ہی تخم ملنگا کی یاد آتی ہے لیکن تاریخ میں اس بیج کو بطور کرنسی بھی استعمال کیا جاتا رہا ہے۔ تخم ملنگا کو دوڑنے والے کی غذا بھی کہا جاتا ہے۔ تخم ملنگا میں کاربوہائیڈریٹس، چکنائی،  فائبر، مینگنیز، فاسفورس، کیلشیم کے علاوہ وٹامن، معدنیات، نیاسن، آیوڈین اور تھایامائن موجود ہوتا ہے۔ اس کے علاوہ تخم ملنگا میں کئی طرح کے اینٹی آکسیڈنٹس بھی پائے جاتے ہیں۔ میکسکو میں تخمِ ملنگا پر تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ اس میں قدرتی فینولک (اینٹی آکسیڈنٹ) کی مقدار دوگنا ہوتی ہے اور یہ جسم میں فری ریڈیکل بننے کے عمل کو روکتا ہے۔ اس طرح ایک جانب تو یہ جلد کے لیے انتہائی مفید ہے تو دوسری جانب بڑھاپے کو بھی روکتا ہے۔ فائبر کی بلند مقدار کی وجہ سے تخم ملنگا ہاضمے کے لئے انتہائی موزوں ہے۔ السی اور تخم ملنگا خون میں انسولین کو برقرار رکھتے ہیں اور کولیسٹرول اور بلڈ پریشر کو بھی لگام دیتے ہیں۔ طبی تحقیقات سے معلوم ہوا ہے کہ فائبر پانی جذب کرکے پیٹ بھرنے کا احساس دلاتا ہے اور وزن گھٹانے کے لئے انتہائی مفید ہے۔ اس کا استعمال معدے کے لئے مفید بیکٹیریا کی مقدار بڑھاتا ہے۔ تخم ملنگا کولیسٹرول گھٹاتا ہے، بلڈ پریشر معمول پر رکھتا ہے اور دل کے لئے بہت مفید ہے۔ اس کا باقاعدہ استعمال خون کی شریانوں کی تنگی روکتا ہے اور انہیں لچکدار بناتا ہے۔ اومیگا تھری فیٹی ایسڈ کی وجہ سے یہ دل کا ایک اہم محافظ بیج ہے۔ تخم ملنگا میں الفا لائنولک ایسڈ اور فائبر کی وجہ سے خون میں چربی نہیں بنتی اور نہ ہی انسولین سے مزاحمت پیدا ہوتی ہے۔ یہ دو اہم اشیا ہیں جو آگے چل کر ذیابیطس کی وجہ بنتے ہیں۔ اسی لئے ملنگا بیج کا باقاعدہ استعمال ذیابیطس کو روکنے میں بہت مددگار ثابت ہوتا ہے۔

عوامی سروے

سوال: کیا نواز شریف کے ممبئی حملوں سے متعلق بیان کے بعد ان کے خلاف سخت کارروائی ہونی چاہئے؟