Uncategorized

برگر شاپوں پر رش ختم، سگھڑ روبوٹ نے کچن سنبھال لیا

برگر شاپ پر رش نمٹانے اور کام میں تیزی کےلئے روبوٹ میدان میں ٓ آگیا ۔
مائیسو روبوٹ نامی کمپنی نے اس ضمن میں اپنا نیا روبوٹ ماڈل فلپی ٹو کے نام سے پیش کیا ہے۔ اس کا اولین ماڈل شکاگو کی کاسل ہمبرگر کی کئی دکانوں پر شروع کیا گیا تھا جہاں یہ بہت کامیاب رہا تھا۔جہاں جہاں اس سے استفادہ کیا جا رہا ہے وہاں پر رش نہیں لگتا.
روبوٹ سسٹم میں ایک آٹوبِن آپشن بھی ہے جہاں کٹی پیاز، گوشت کے قتلے اور دیگر اشیا رکھی اور اٹھائی جاسکتی ہیں۔ ایک روبوٹ بازو بہت تیزی سے اشیا کو ملائے بغیر سبزیوں اور پنیر کو بھی اٹھا سکتا ہے۔
فلپی ٹو روبوٹ ایک گھنٹے میں 60 ٹوکریاں بھگتا سکتا ہے اور 50 فیصد تک وقت کی بچت ہوسکتی ہے۔ اپنا کام کرنے کےلیے اسے بہت کم جگہ کی ضرورت ہوتی ہے۔ روبوٹ بہت محتاط انداز میں کباب اٹھا کر انہیں الٹ اور پلٹ سکتا ہے۔ مائسو کمپنی کے مطابق ان کی ایجاد پوری دنیا میں 280 ارب ڈالر کی مارکیٹ رکھتی ہے۔
یہ روبوٹ مددگار اسٹاف کی شدید قلت کو بھی دور کرسکتا ہے۔ امریکہ اور یورپ میں کووڈ 19 کی عالمی وبا سے اسٹاف کی کمی ہے ۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ مصنوعی ذہانت کی بدولت چند روبوٹ مل کر فرائیز اور برگر کی پوری دکان چلاسکتےہیں۔
برگروالے روبوٹ کا پہلا ماڈل 2017 میں بنایا گیا تھا جس کا دوسرا جدید ماڈل تیار کیا گیا ہے۔ کمپیوٹر وژن اور مصنوعی ذہانت کی بل پر کام کرنے والا یہ روبوٹ گرم تیل، تنگ جگہوں اور دیگر مشکلات میں اپنا کام جاری رکھتا ہے۔ لیکن ایک یا دو انسانی رہنما کی ضرورت ہوتی ہے۔ یوں پوری دکان کا کام آسان ہوجاتا ہے۔ روبوٹ رش لگنے نہیں دیتا وہ سگھڑ انداز میں پورا کچن کام سمیت سنبھال لیتا ہے .

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button