تازہ ترینخبریںپاکستان سے

لوچستان کے بلدیاتی انتخابات کے نتائج نے پارٹیوں‌ کی سیاست پر سوالیہ نشان لگا دیا، 1222 آزاد امیدوار کامیاب

بلوچستان کے بلدیاتی انتخابات کے نتائج نے پارٹیوں‌ کی سیاست پر سوالیہ نشان لگا دیا ہے، آزاد امیدواروں نے بلدیاتی انتخابات میں 1222 نشستیں جیت کر پارٹیوں سے نالاں عوام کی رائے ظاہر کر دی۔

غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق پارٹیوں میں جمعیت علمائے اسلام سب سے آگے ہے، تاہم آزاد امیدواروں کی تعداد کو دیکھتے ہوئے جے یو آئی بھی بہت ہی پیچھے دکھائی دیتی ہے۔

گزشتہ روز بلوچستان کے 32 اضلاع میں بلدیاتی انتخابات کے لیے پولنگ ہوئی، ووٹنگ میں شہریوں نے بھرپور دل چسپی لی اور خواتین نے بھی بڑی تعداد میں ووٹ کا حق استعمال کیا، غیر حتمی غیر سرکاری نتائج میں آزاد امیدواروں نے میدان مار لیا ہے۔

اب تک آزاد امیدواروں نے 1222 نشستیں حاصل کی ہیں، جمعیت علمائے اسلام 260 نشستوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر، صوبے کی حکمران جماعت بلوچستان عوامی پارٹی 141 نشستوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہے۔

غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق پشتونخوا میپ 94 نشستوں کے ساتھ چوتھے نمبر موجود ہے، نیشنل پارٹی 64، بی این پی مینگل 54 نشستوں پر کامیاب ہوئی، غیر متوقع طور پر پیپلز پارٹی نے 47 نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے، پی ٹی آئی نے 20، عوامی نیشنل پارٹی 19، جمہوری وطن 17، اور مسلم لیگ ن نے 15 نشستیں حاصل کیں، جب کہ مکران میں حق دو پارٹی کو واضح برتری حاصل ہوئی ہے۔

اے آر وائی نیوز نے سب سے پہلے نتائج دینے کی روایت برقرار رکھی، پولنگ کے دوران چمن، سبی، کوہلو، جعفر آباد کے چند پولنگ اسٹیشنز پر جھگڑے اور ہوائی فائرنگ بھی ہوئی، جس میں 16 افراد زخمی ہوئے، تربت اور خالق آباد میں پولنگ اسٹیشن پر دستی بم حملے میں 2 افراد زخمی ہوئے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button