تازہ ترینخبریںپاکستان سے

ریکارڈ قائم: ملکی تاریخ میں کوئی وزیراعظم اپنی 5 سالہ مدت پوری نہیں کرسکا

سال 1947 میں ملک کے معرض وجود میں آنے کے بعد سے اب تک کسی بھی منتخب وزیر اعظم نے اپنی پانچ سالہ مدت پوری نہیں کی اور عمران خان اس فہرست میں شامل 19ویں شخص ہیں۔

عمران خان پہلے وزیر اعظم ہیں جنہیں عدم اعتماد کی قرارداد کے آئینی اقدام کے ذریعے ہٹایا گیا ہے۔

ملک کے سب سے پہلے وزیر اعظم لیاقت علی خان کو 16 اکتوبر 1951 کو قتل کر دیا گیا تھا۔

ان کے بعد 7 وزرائے اعظم مستعفی ہوئے، 5 کو برطرفی کا سامنا کرنا پڑا جبکہ 4 وزرائے اعظم کی حکومتیں فوجی بغاوتوں کے ذریعے معزول کردی گئیں۔

نواز شریف اور یوسف رضا گیلانی وہ دو افراد تھے جنہیں سپریم کورٹ کی جانب سے سزا سنائے جانے کی باعث نااہل قرار دیا گیا تھا۔

شوکت عزیز، راجا پرویز اشرف اور شاہد خاقان عباسی وہ اشخاص ہیں جنہوں نے قومی اسمبلی کی 5 سالہ مدت پوری ہونے پر عہدہ چھوڑا لیکن انہوں نے اپنے پیش روؤں کی نااہلی اور استعفے کے بعد باقی ماندہ مدت پوری کرنے کے لیے ہی یہ عہدہ سنبھالا تھا۔

اس فہرست میں شامل نواز شریف وہ واحد شخص ہیں جنہیں اپنے تین ادوار میں چار مرتبہ ملک کا اعلیٰ عہدہ چھوڑنا پڑا۔

البتہ نواز شریف کو وزیر اعظم کے دفتر میں 3 ہزار 422 روز کے ساتھ سب سے طویل قیام کا کریڈٹ جاتا ہے۔

عمران خان ایک ہزار 335 روز کے ساتھ دفتر میں گزارے گئے دنوں کی تعداد کے لحاظ سے چھٹے نمبر پر ہیں، ان سے پہلے بے نظیر بھٹو، لیاقت علی خان، یوسف رضا گیلانی اور ذوالفقار علی بھٹو ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button