تازہ ترینخبریںدنیا سے

ایلون مسک کو اپنے قتل کا خدشہ ستانے لگا

ٹوئٹر کے مالک ایلون مسک نے دعویٰ کیا ہے کہ ان کے ساتھ کچھ برا ہونے یا قتل کا خطرہ بہت زیادہ ہے۔

ٹوئٹر سپیسز میں آڈیو چیٹ کے دوران ایلون مسک نے یہ خدشہ ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اب وہ کسی اوپن ائیر کار پریڈ کا حصہ نہیں بنیں گے۔

انہوں نے کہا کہ میرے ساتھ کچھ برا ہونے یا مجھ پر فائرنگ کا خطرہ بہت زیادہ ہے، اگر آپ کی خواہش ہو تو کسی کو بھی مارنا ناممکن نہیں۔ توقع ہے کہ میرے ساتھ ایسا کچھ نہیں ہوگا مگر اس طرح کے خطرات موجود ہیں’۔

اس موقع پر انہوں نے آزادی رائے کے حق اور ٹوئٹر کے لیے اپنے مستقبل کے منصوبوں پر بھی بات کی۔ان کا کہنا تھا کہ ہم ایسا مستقبل چاہتے ہیں جہاں ہمیں دبایا نہ جائے، جہاں ہماری رائے کو دبایا نہ جائے اور ہم بغیر کسی ڈر کے اپنی بات کرسکیں۔ جب تک آپ کسی کو نقصان نہ پہنچا رہے ہوں، آپ کو اپنی بات کہنے کا حق ہونا چاہیے۔

دنیا کے امیر ترین شخص نے کہا کہ انسانی تاریخ میں آزادی رائے کا حق عام نہیں تھا، تو ہمیں اس کے لیے سخت جنگ کرنا ہوگی۔

انہوں نے قتل کا خدشہ اس وقت ظاہر کیا جب 2 دسمبر کو ایک صحافی کی جانب سے ٹوئٹر فائلز جاری کی گئی تھیں۔

ان فائلز میں کہا گیا تھا کہ جو بائیڈن کی ٹیم نے صدارتی انتخابات سے قبل اکتوبر 2020 کو ٹوئٹر کے ملازمین کو مخصوص سیاسی مواد ہٹانے کی ہدایت کی تھی۔

ایلون مسک نے اس حوالے سے بتایا کہ انہوں نے صحافیوں کو ٹوئٹر کی پرانی دستاویزات تک رسائی دی تھی اور یہ اشارہ دیا کہ مزید ٹوئٹر فائلز کو بھی جاری کیا جاسکتا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button