تازہ ترینخبریںپاکستان سے

سانحہ مشرقی پاکستان فوجی نہیں سیاسی ناکامی تھی، آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ 1971ء سے متعلق کچھ حقائق درست کرنا چاہتا ہوں ، 1971ء میں فوجی نہیں سیاسی ناکامی تھی۔

جی ایچ کیو میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آرمی چیف نے کہا کہ ہماری فوج مشرقی پاکستان میں بہت جرات مندی سے لڑی ۔ انہوں نے کہاکہ پاک فوج دہشت گردی کا مقابلہ کرنے سے کبھی غافل نہیں ہو گی ، سابقہ مشرقی پاکستان کا سانحہ ایک فوجی نہیں سیاسی ناکامی تھی۔

انہوں نے بتایا کہ لڑنے والے فوجیوں کی تعداد 92 ہزار نہیں صرف 34 ہزار تھی، 34 ہزار افراد کا مقابلہ ڈھائی لاکھ بھارتی فوج دو لاکھ ٹرینڈ  مکتی باہنی سے تھا۔

آرمی چیف نے کہا کہ 1971میں پاک فوج بہادری سے لڑی اور بے مثال قربانیاں پیش کیں، پاک فوج کی قربانیوں کا اعتراف بھارتی فوج کے آرمی چیف نے بھی کیا، قوم نے ان فوجیوں کی قربانیوں کا اعتراف آج تک نہیں کیا جو بڑی زیادتی ہے۔

آرمی چیف نے کہا کہ ہمیں ماضی کی غلطیوں سے سیکھنا ہوگا، ہمیں غلطیوں سے سبق سیکھ کر آگے بڑھنے کی ضرورت ہے، معاشرے میں عدم برداشت کا کلچر ختم کرنا ہوگا۔

جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ سیاست میں مداخلت نہ کرنے کے عزم پر کاربند ہیں، قیادت کچھ بھی کرسکتی ہے لیکن ملک کے خلاف نہیں جا سکتی، جو سمجھتے ہیں عوام اور فوج میں دراڑیں ڈال دیں گے ان کی بھول ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button