جرم کہانی

لاہور کے بیوٹی پارلر میں خواتین کی نیم برہنہ تصاویر بنانے کا انکشاف

لاہور میں بیوٹی پارلر میں خواتین کی برہنہ تصاویر بنانے پر مقدمہ درج کر لیا گیا۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق تھانہ نواب ٹاؤن پولیس نے سائبر پیکا ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا۔

ایف آئی آر کے متن کے مطابق لڑکیاں بیوٹی پارلر میں اسکن پالش کروانے کے لیے آئی تھیں، بیوٹی پارلر مالکن نے لڑکیوں کی نیم برہنہ تصاویر بنا لیں۔

ایف آئی آر میں کہا گیا کہ مالکن کے موبائل سے متعدد لڑکیوں کی نیم برہنہ تصویریں بھی برآمد ہوئیں جو کہ ملزمہ نے واٹس ایپ گروپس میں بھی شیئر کی ہوئی تھیں۔

لاہور پولیس نے مقدمہ درج کر کے کیس کو مزید تحقیقات کے لیے انچارج سائبر ونگ کے حوالے کر دی کردیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button