دنیا

ویڈیو: جنگ غزہ، صیہونی فوجیوں کے لئے موت کی دلدل بن گئی

غزہ کی جنگ کے دوران صیہونی فوجی اتنی بڑی تعداد میں زخمی ہوئے ہیں کہ ریکارڈ ٹوٹ گیا ہے۔

5 جنوری کو صیہونی اخبار یدیعوت آحارنوت نے غزہ کی لڑائی میں اسرائیلی فوج کے مستقل زخمیوں کے اعداد و شمار شائع کرتے ہوئے لکھا کہ یہ صورتحال تل ابیب کی تاریخ میں بے مثال اور بے نظیر ہے۔

فارس نیوز کے مطابق یدیعوت آحارنوت نے لکھا ہے کہ زخمی فوجیوں کی بڑھتی ہوئی تعداد، تاریخی لحاظ سے ایک قومی حادثہ بن گیا ہے، ہمیں 3400 فوجیوں کی بحالی کے لیے وسیع طریقہ کار کی ضرورت ہے۔

اس عبرانی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق تل ابیب کی وزارت جنگ نے بتایا کہ غزہ جنگ کے دوران 12 ہزار 500 سے زائد اسرائیلی فوجیوں کے مستقل طور پر معذور ہونے کی توقع ہے۔

غزہ پٹی پر اسرائیل کے فضائی اور زمینی حملوں کے 90 روز بعد فوج کے ترجمان نے اعتراف کیا کہ اب تک 500 سے زائد اسرائیلی فوجی مارے جا چکے ہیں تاہم زخمیوں کی سرکاری اور حقیقی تعداد کا اعلان نہیں کیا۔

ہسپتال کے ذرائع نے عبرانی میڈیا سے بات چیت میں اسرائیلی اداروں کے درمیان شماریاتی تضاد کی تصدیق کی اور جنگ کے زخمیوں کے روزانہ داخلے کے بارے میں بتایا۔

 تل ابیب میں واقع بیلنسن ہسپتال نے کل رات اعلان کیا کہ اس نے 3 زخمی فوجیوں کو داخل کرایا ہے۔

اس سے قبل سوروکا اسپتال نے نئے سال کے پہلے دن اعلان کیا تھا کہ اس نے صرف 24 گھنٹوں میں 9 زخمی اسرائیلی فوجیوں کو اسپتال میں بھرتی کیا ہے۔

صیہونی اخبار یدیعوت آحارنوت نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ غزہ جنگ کے آغاز سے اب تک مختلف درجے کے 2,384  زخمی فوجیوں کو سوروکا اسپتال منتقل کیا گیا ہے اور انہیں فوج سے فارغ کر دیا گیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button