تازہ ترینخبریںپاکستان سےکاروبار

حبیب بینک کی درخواست مسترد ، صدر مملکت عارف علوی نے فیصلہ سنا دیا

صدر مملکت عارف علوی نے حبیب بینک لمیٹڈ کی جانب سے وفاقی محتسب کے فیصلے کے خلاف درخواست مسترد کرتے ہوئے بینک کو رحیم یار خان کے ایک غریب باورچی کو 249,525 روپے ادا کرنے کا حکم دیدیا ، صدر مملکت عارف علوی نے کہا ہے کہ ملک کے تمام بینک اپنے صارفین کو بینکنگ فراڈ کے بارے میں باقاعدگی سے خبردار کرتے رہیں ۔

صارفین کے ساتھ معمول کے رابطے کو بہتر بنائیں، سادہ لوح لوگوں کو اکثر دھوکہ بازوں کے جال میں پھنسایا جا رہا ہے، جعلی کالوں کے ذریعے اور بعض اوقات بینک کے احاطے کے اندر بھی عوام کی محنت سے کمائی گئی رقم ہتھیا لی جاتی ہے۔

. جاری اعلامیہ کے مطابق شہری کو دھوکے بازوں نے ٹیلی فون پر بینک اہلکار ظاہر کر کے ذاتی بینکنگ معلومات حاصل کیں اور آن لائن بینکنگ اکاؤنٹنگ کی مدد سے اکاؤنٹ سے رقم نکلوا لی . صدر مملکت نے کہاکہ سٹیٹ بینک کی ہدایات کے مطابق، بینک الیکٹرانک فنڈز ٹرانسفر سہولت کو فعال کرنے سے پہلے صارف کی رضامندی حاصل کرنے کے پابند ہیں . صدر مملکت نے کہاکہ بینک اس سلسلے میں کوئی دستاویز/ ثبوت پیش کرنے میں ناکام رہا ، حبیب بینک نے قانون، قواعد و ضوابط کی دفعات کی تعمیل نہیں کی . صدر مملکت نے کہاکہ بینک ثابت نہیں کر سکا کہ اس نے صارف کو سہولت کے بارے میں تحریری طور پر آگاہ کیا تھا . صدر مملکت نے کہاکہ بینک نے صارف کیلئے واضح طور پر قابل فہم انداز میں الیکٹرانک فنڈ ٹرانسفر سہولت کے فوائد اور نقصانات کی وضاحت نہیں کی ۔

صدر مملکت نے کہاکہ نقصان اس وجہ سے ہوا کہ بینک کی ای ایف ٹی سہولت کو کھاتہ دار کی رضامندی اور علم کے بغیر یکطرفہ طور پر آپریشنل کر دیا گیا . صدر مملکت نے کہاکہ اگر یہ چینل بینک نے نہ کھولا ہوتا تو اکاؤنٹ ہولڈر اس مالی نقصان سے بچ سکتا تھا ۔

سٹیٹ بینک کے قواعد و ضوابط کی سنگین خلاف ورزیوں پر بینک بدعنوانی اور بدانتظامی کا مرتکب ہوا، بینک اپنی قانونی ذمہ داری کو ادا کرنے میں ناکام رہا، محتسب کے اصل حکم میں مداخلت کا کوئی جواز نہیں، علی محمد (شکایت کنندہ) سے دھوکے بازوں نے اس کی رقم ہتھیا لی تھی

اس نے اپنی رقم کی واپسی کے لیے بینک سے رجوع کیا تھا،کوئی نتیجہ نہ ملنے پر شہری نے اپنی لوٹی ہوئی رقم کی واپسی کے لیے وفاقی محتسب سے رابطہ کیا، محتسب نے کیس کی تفتیش اور سماعت کے بعد HBL کو کھوئی ہوئی رقم واپس کرنے کی ہدایت کی . بینک نے فیصلے پر عمل درآمد کرنے کے بجائے فیصلے کے خلاف صدر مملکت کے پاس درخواست دائر کی جسے صدر نے مسترد کر دیا  ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button