تازہ ترینخبریںدلچسپ و حیرت انگیز

ایم ایس سی ڈگری ہولڈر سوئپر بن گیا

سوات سے تعلق رکھنے والا ظفر علی ایم ایس سی کی ڈگری مکمل کرنے کے بعد سوئپر بھرتی ہوگیا۔

ظفر علی کا کہنا ہے کہ اچھی نوکری کیلئے اُس نے در در کی ٹھوکریں کھائیں، نوجوان کا کہنا ہے کہ وہ معاشی حالات سے تنگ تھا، کچرا اٹھانے اورصفائی ستھرائی کی 14 ہزار کی نوکری ملی تو فورا ہاں کہہ دی۔

ظفر علی کا تعلق خیبرپختونخوا کے ضلع سوات کی تحصیل کبل سے ہے، والدین کے واحد سہارے نوجوان طالب علم ظفر علی نےخوب دل لگا کر محنت کی اور ایم ایس سی کی ڈگری حاصل کرلی۔

ظفرعلی نوکری کے حصول کیلئے نکلا تو کچھ ہاتھ نہ آیا ، کے پی میں ٹیچنگ اور سپریم کورٹ آف پاکستان میں نائب قاصد سمیت درجنوں درخواستیں دیں لیکن کہیں بات نہ بنی۔

ظفر علی کو راولپنڈی انسٹی ٹیوٹ آف یورالوجی میں سوئپرکی نوکری ملی تو اُس نے ہاں کہنے میں دیر نہ لگائی۔

ظفرعلی کا کہنا ہے کہ اس کے غریب والدین نے اس کے اعلیٰ تعلیم کے حصول کاسپنا سچ کرنےکیلئے اپنا سب کچھ اس پر وار دیا، اس نے بھی دن رات پڑھائی کر کے منزل پالی لیکن اب عملی زندگی شروع کی تو مشکلات کا پہاڑ آن گرا ہے۔

بشکریہ روزنامہ جنگ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button