تازہ ترینخبریںپاکستان سے

لاہور ہائی کورٹ نے 7 ماہ میں 95ہزار 762 مقدمات نمٹا دیے

لاہور ہائی کورٹ کی پرنسپل سیٹ اور اس کے تین علاقائی بنچوں نے جنوری سے جولائی تک گزشتہ 7 ماہ کے دوران 95ہزار 762 مقدمات نمٹائے۔

لاہور ہائی کورٹ کے ججز کے دوسرے روز ہونے والے فل کورٹ اجلاس کے بارے میں جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ پرنسپل سیٹ لاہور پر 53ہزار 955، ملتان میں 24ہزار 174، بہاولپور میں 11ہزار221 اور راولپنڈی بینچ میں 6ہزار412 مقدمات کا فیصلہ کیا گیا۔

بیان میں زیر التوا مقدمات کے اعداد و شمار فراہم نہیں کیے گئے تاہم اس حوالے سے کہا گیا کہ گزشتہ 7 ماہ کے دوران لاہور ہائی کورٹ کی تمام نشستوں میں 91ہزار نئے مقدمات قائم کیے گئے۔

اس سے پتہ چلتا ہے کہ پنجاب کے ضلعی عدالت نے اسی عرصے کے دوران 16 لاکھ سے زائد مقدمات کا فیصلہ کیا جن میں سے سیشن عدالتوں نے 40ہزار مقدمات کا فیصلہ کیا جبکہ سول اور مجسٹریل عدالتوں نے 12 لاکھ سے زائد مقدمات کا فیصلہ کیا۔

بیان میں کہا گیا کہ اس عرصے کے دوران سول اور سیشن عدالتوں میں 11لاکھ 60ہزار نئے مقدمات قائم کیے گئے ہیں، اس سلسلے میں دعویٰ کیا گیا کہ فیصلہ شدہ مقدمات کے اعداد و شمار ضلعی عدلیہ میں نئے دائر ہونے والے مقدمات سے زیادہ رہے۔

وفاقی اور صوبائی ایکس کیڈر عدالتوں، خصوصی عدالتوں اور ٹربیونلز نے 72ہزار545 مقدمات کا فیصلہ کیا۔

چیف جسٹس محمد امیر بھٹی کی زیر صدارت فل کورٹ اجلاس میں ملک میں بڑے پیمانے پر سیلاب سے متاثرہ شہریوں کی حالت زار پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا گیا۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ لاہور ہائی کورٹ کے تمام ججز اپنی دو دن کی تنخواہ وزیراعظم ریلیف فنڈ میں عطیہ کریں گے۔

لاہور ہائی کورٹ کے بی ایس-15 سے 17 تک کے افسران اپنی ایک دن کی تنخواہ جبکہ بی ایس-17 اور اس سے اوپر کے افسران دو دن کی تنخواہ فنڈ میں عطیہ کریں گے، جوڈیشل ڈسٹرکٹ کے ججز اور افسران بھی اپنی تنخواہیں فنڈ میں عطیہ کریں گے۔

تقرریاں: لاہور ہائی کورٹ نے پنجاب میں 81 سینئر سول جج و جوڈیشل مجسٹریٹس کے تبادلے اور تقرریاں کی ہیں تاکہ سینئرٹی کے مطابق مناسب ڈویژن کا کام مختص کیا جا سکے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button