Welcome to JEHANPAKISTAN   Click to listen highlighted text! Welcome to JEHANPAKISTAN
تازہ ترینخبریںدلچسپ و حیرت انگیزدنیا سے

بھارت ، گائے کے پیشاب کی سرکاری خریداری شروع

بھارتی وسطی ریاست چھتیس گڑھ ‘گؤ موتر‘ (گائے کا پیشاب) کی سرکاری طور پر خریداری کرنے والی پہلی ریاست بن گئی ہے۔ ریاست کےوزیر اعلیٰ بھوپیش بگھیل نے پانچ لٹر گؤ موتر بیچ کر بیس روپے کی آمدن کے ساتھ اس منصوبے کا افتتاح کیا۔

کانگریس کی حکومت والی ریاست چھتیس گڑھ نے گائے کے فضلات کی خریداری کو توسیع دیتے ہوئے اب گائے کے پیشاب کی خریداری کا بھی باضابطہ آغاز کر دیا ہے۔ اس کے لیے ریاست کے کئی اضلاع میں باضابطہ مراکز قائم کیے گئے ہیں، جہاں بالخصوص گؤ شالاؤں میں رکھی گئی گائیوں کا پیشاب خریدا جائے گا۔

چھتیس گڑھ کے وزیر اعلیٰ بھوپیش بگھیل نے گزشتہ دنوں اس منصوبے کا افتتاح کیا۔ انہوں نے بتایا کہ گائے کے پیشاب کی خریداری کا سرکاری ریٹ چار روپے فی لٹرمقرر کیا گیا ہے۔ پہلے روز لوگوں نے گائیوں کا 2300 لٹر پیشاب فروخت کیا۔

انہوں نے بتایا کہ گؤ شالہ کمیٹیوں اور خود امدادی گروپوں کو گؤ موتر کی خریداری کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔ افتتاح کے موقع پر وزیر اعلیٰ بگھیل اپنے گھر سے گائیوں کے پیشاب لے کر ایک خریداری مرکز پہنچے تھے۔ انہوں نے پانچ لٹر گؤ موتر فروخت کیا اور انہیں 20 روپے کی آمدنی کی۔

بگھیل نے بتایا کہ گائے کے پیشاب سے ‘برہم استرا‘ نامی جراثیم کش محلول اور ‘جیوامرت‘ نامی کھاد تیار کیے جائیں گے۔

ریاستی حکومت نے گائے کے فضلات کی خریداری کی سکیم کا آغاز سن 2020 میں کیا تھا۔ وہ پہلے ہی دو روپے فی کلوگرام کے حساب سے گائے کا گوبر خرید رہی ہے۔ اس گوبر کو نامیاتی کھاد بنانے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
Click to listen highlighted text!