تازہ ترینخبریںفن اور فنکار

شرمیلا فاروقی اور نادیہ خان کیس میں اہم پیشرفت

کراچیٜ پیپلز پارٹی کی رکن سندھ اسمبلی شرمیلا فاروقی اور مارننگ شو کی سابق میزبان نادیہ خان کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ چند روز قبل شرمیلا فاروقی نے نادیہ خان کو ان کی والدہ کی متنازعہ ویڈیو پر 50ملین  روپے کا ہتک عزت کا نوٹس بھیجا تھا۔
شرمیلا فاروقی نے اپنی انسٹاگرام سٹوری پر شیئر کیے گئے نوٹس میں کہا تھا کہ نادیہ خان نے اپنے یوٹیوب چینل پر ایک ہتک آمیز ویڈیو شائع کی ہے جس میں انہوں نے ان کی والدہ انیسہ فاروقی کی پرئیوایسی کی خلاف ورزی کی اور ان کی میک اپ لُک کا مذاق اڑایا۔
نوٹس میں شرمیلا فاروقی کی جانب سے نادیہ خان کو 15دن کا وقت دیا گیا کہ وہ نہ صرف اپنے ریمارکس واپس لے بلکہ معافی بھی مانگے اور 50ملین بطور معاوضہ ادا کرے۔ شرمیلا فاروقی کے ہتک عزت کے نوٹس کے جواب میں نادیہ خان نے بھی اپنے وکیل کے توسط سے شرمیلا فاروقی کو ان کے خلاف توہین آمیز ریمارکس استعمال کرنے پر 50کروڑ ہرجانے کا نوٹس بھیجا تھا۔
اب اس کیس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ شرمیلا فاروقی نے گزشتہ روز انسٹاگرام سٹوری پر وفاقی محتسب کے نوٹس کا سکرین شاٹ شیئر کیا اور  بتایا کہ وفاقی محتسب نے نادیہ خان کو اس کیس سے متعلق کسی بھی طرح کی بحث کرنے یا کیس پر تبصرہ کرنے سے روک دیا ہے۔
واضح  رہے کہ کچھ روز قبل نادیہ خان کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تھی جس میں وہ شرمیلا فاروقی کی والدہ انیسہ فاروقی سے تمسخر اڑانے والے انداز میں ان کے میک اپ کے بارے میں پوچھ رہی تھیں۔ شرمیلا فاروقی نے نادیہ خان کے اپنے والدہ کے ساتھ رویے پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے انہیں بے شرم عورت کہا تھا اور ان کے خلاف سائبر کرائم میں شکایت بھی درج کروائی تھی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button