تازہ ترینخبریںپاکستان سے

وزیراعظم کا اسلاموفوبیا کےخلاف کینیڈین وزیراعظم کے بیان کا خیرمقدم

وزیر اعظم عمران خان نے کینیڈین ہم منصب جسٹن ٹروڈو کی جانب سے اسلامو فوبیا سے نمٹنے کے لیے نمائندہ خصوصی مقرر کرنے کے فیصلے کا خیر مقدم کیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر وزیر اعظم عمران خان نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ ‘میں وزیراعظم جسٹن ٹروڈو کی جانب سے اسلامو فوبیا کی صریح مذمت اور دورِحاضر کی اس لعنت کے تدارک کے لیے نمائندۂ خصوصی مقرر کرنے کے فیصلے کا خیر مقدم کرتاہوں’۔

انہوں نے کہا کہ جسٹن ٹروڈو کا یہ بروقت اقدام (اسلاموفوبیا سے متعلق) اس مطالبے کی تائید ہے جو میں ایک عرصے سے دہراتا رہا ہوں۔

ان کا کہنا تھا کہ آئیے سب مل کر اس آفت کے خاتمے کے لیے جدوجہد کریں۔

واضح رہے کہ ایک روز قبل کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو کی جانب سے اسلامو فوبیا سے نمٹنے کے لیے نمائندہ خصوصی مقرر کرنے کا ارادہ ظاہر کیا گیا تھا۔

انہوں نےاپنے ٹوئٹ میں کہا تھا کہ اسلامو فوبیا ناقابل قبول ہے، ہمیں اس نفرت کو روکنا ہاور کینیڈین مسلمانوں کو ایک محفوظ ماحول فراہم کرنا ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ‘اسلاموفوبیا کی روک تھام کے لیے ان اقدامات میں مدد کے لیے ہم ایک نمائندہ خصوصی مقرر کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں’۔

دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اور وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات فرخ حبیب نے بھی اپنی ٹوئٹ میں کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو کے اقدام کی تعریف کی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button