تازہ ترینخبریںفن اور فنکار

ماضی میں اداکار نے گرل فرینڈ کے کہنے پر فلموں سے نکالا

بولی وڈ کی ماضی کی ’مست گرل‘ کہلانے والی اداکارہ روینا ٹنڈن نے انکشاف کیا ہے کہ جب وہ کیریئر کے عروج پر تھیں تو ایک اداکار نے اپنی گرل فرینڈ کے کہنے پر انہیں دو فلموں سے نکالا۔

روینا ٹنڈن نے حال ہی میں ریڈیو جوکی (آر جے) اور ویڈیو جوکی (وی جے) سدھارتھ کنن کو دیے گئے انٹرویو میں ماضی میں خود سے متعلق پھیلنے والی افواہوں پر بھی کھل کر باتیں کیں۔

اداکارہ نے بتایا کہ جب انہوں نے شادی کی تو لوگوں کے بجائے میڈیا کو مسئلہ ہوا اور اس وقت اخبارات ان سے متعلق مصالحہ دار خبریں لگا کر افواہیں پھیلانے لگے۔

روینا ٹنڈن نے بتایا کہ انہوں نے اس وقت بچیوں کو گود لیا جب اس طرح کا کوئی رجحان ہی نہیں ہوتا اور آج ان کی گود لی بیٹی شادی شدہ زندگی گزار رہی ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں روینا ٹنڈن نے بتایا کہ ان کی اس وقت کی مقبول ترین اداکاراؤں کے ساتھ کبھی کوئی لڑائی یا دشمنی نہیں رہی، یہ ساری افواہیں میڈیا پھیلاتا رہا ہے۔

روینا ٹنڈن نے کہا کہ شلپا شیٹی، کاجول اور کرشما کپور جیسی اداکاراؤں کے ساتھ ان کی دوستی رہی ہے اور تاحال وہ بہترین سہیلیاں ہیں مگر میڈیا میں ایسی افواہیں پھیلائی جاتی رہیں ہیں کہ ان کے درمیان دشمنی ہے۔

اداکارہ نے واضح کیا کہ انہوں نے تو شلپا شیٹی اور کاجول کے ساتھ فلمیں بھی کر رکھی ہیں جب کہ کرشما کپور سے بھی ان کی اچھی دوستی ہے اور ان کے درمیان کوئی سیاست یا لڑائی نہیں ہے۔

انٹرویو کے دوران روینا ٹنڈن نے ہیروئنز کو فلموں سے اچانک نکالے جانے کے معاملے پر بتایا کہ ہیروئنز کو دوسروں کی فرمائش یا کہنے پر فلموں سے نکالے جانے کا سلسلہ پرانا ہے۔

انہوں نے ماضی کو یاد کرتے ہوئے بتایا کہ جب وہ کیریئر کے عروج پر تھیں تو ایک اداکار نے اپنی گرل فرینڈ کے کہنے پر انہیں دو فلموں سے نکالا مگر پھر ہیرو کو وہ خاتون ہی چھوڑ کر چلی گئیں۔

اداکارہ نے بتایا کہ جب اداکار کو گرل فرینڈ چھوڑ کر چلی گئیں تو وہ ان کے پاس آئے اور انہیں فلم میں ایک ساتھ کام کرنے کی منتیں کیں۔

روینا ٹنڈن نے یہ بھی بتایا کہ نہ صرف اس خاتون نے بوائے فرینڈ کو کہہ کر انہیں دو فلموں سے نکلوایا بلکہ وہ دوسرے ہیروز کے پاس بھی گئیں اور ان کے سامنے روئیں اور کہا کہ روینا کو فلم میں کاسٹ نہ کریں۔

بولی وڈ اداکارہ کا کہنا تھا کہ وہ خاتون جن کے پاس گئیں، انہوں نے انہیں بتایا کہ وہ مجبور ہیں، کیوں کہ خاتون ان کے سامنے روئی تھیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button