سیاسیات

پنجاب اسمبلی کا اجلاس شروع ہوتے ہی ارکان میں نوک جھوک

 پنجاب اسمبلی کا اجلاس شروع ہوتے ارکان میں نوک جھوک ہوئی، جس پر جس پر اسپیکر پنجاب اسمبلی سبطین خان نے ارکان اسمبلی کو بات کرنے سے روک دیا۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب اسمبلی کا اجلاس تاخیر سے شروع ہوا، مریم نوازسمیت ن لیگ واتحادی جماعتوں کے 215ارکان نے شرکت کی جبکہ پی ٹی آئی حمایت یافتہ 97 ارکان بھی حلف اٹھانے آئے۔

اجلاس کی کارروائی شروع ہوتے ارکان میں نوک جھوک ہوئی، جس پر اسپیکر پنجاب اسمبلی سبطین خان نے ارکان اسمبلی کو بات کرنے سے روک دیا اور کہا کہ ابھی آپ نے حلف نہیں اٹھایا۔

سنی اتحاد کونسل کے نو منتخب رکن رانا شہباز نے مخصوص نشستوں کا معاملہ ایوان میں اٹھا دیا، نو منتخب رکن رانا شہباز نے کہا کہ جناب اسپیکر ہم نے سنی اتحاد میں شمولیت اختیار کر لی ہے، ہمیں ہراساں کیا جارہا ہے، ہمارے مہمانوں کو اندر جانے کی اجازت نہیں دی گئی۔

اس دوران ملک احمد خان نے ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ جناب اسپیکر حلف سے پہلے بات نہیں کی جا سکتی ہے، پہلے ارکان کا حلف لیں پھر بات ہوگی۔

جس کے بعد پنجاب اسمبلی میں نمازجمعہ کا وقفہ ہوگیا اور اجلاس 45 منٹ کیلئے ملتوی کردیا گیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button