فن اور فنکار

بلال سعید نے دوران کنسرٹ نوجوان کو مائیک کیوں مارا ؟

گلوکار بلال سعید کی کنسرٹ کے دوران وہاں موجود نوجوانوں پر مائیک پھینکنے کی وجہ سامنے آگئی۔

سوشل میڈیا پر بلال سعید کی ایک ویڈیو زیر گردش تھی جس میں بلال سعید اپنا پرانا گانا ‘کو کو تو میری جانا’ گاتے سنائی دے رہے ہیں کہ اچانک وہ غصے سے آگ بگولا ہوگئے اور ہاتھ میں موجود مائیک حاظرین کی جانب کھینچ کر ماردیا اور اسٹیج چھوڑ کر چلے گئے۔

بلال سعید کو اچانک اسٹیج سے اترتے دیکھ کر ایک ایک شخص کی آواز بھی سنائی دیتی ہے جو کہتا ہے کہ ‘ پروگرام تو وڑ گیا’۔

سوشل میڈیا پر اس ویڈیو کے وائرل ہوتے ہی لوگ اس واقعہ کی تفصیلات جاننے کی کوشش کرتے نظر آرہے ہیں کہ آخر یہ ہوا کہاں اور کب ؟

کنسرٹ میں شریک ایک شخص نے سوشل میڈیا پر گلوکار کے اس اقدام کو شہرت حاصل کرنے کا ایک طریقہ قرار دیا

صارف کا کہنا ہے کہ وہ اس کنسرٹ میں شریک تھا جس میں بلال سعید اپنی آواز کا جادو جگا رہے تھے کہ اچانک انہوں نے وہاں موجود شرکاء کو مائیک دے مارا۔

عبداللہ ریاض نامی صارف کا دعویٰ ہے کہ یہ کنسرٹ انکے کالج میں ہوا تھا، گلوکار نے مائیک اس طالب علم کی طرف پھینکا جو اپنے دوستوں کے ساتھ اس طرح لطف اندوز ہو رہا تھا جیسے وہ چاہتا تھا۔
نوجوان کے انجوائے کرنے سے بلال سعید غصے میں آگئے کیونکہ ان کا خیال تھا کہ یہ ہجوم میں خلل پیدا کررہے ہیں اس لیے انہوں نے مائیک پھینک دیا۔

صارف کا کہنا تھا کہ گلوکار کا ایسا کرنا کسی طور درست نہیں ہے، انہیں یہ انتہائی اقدام اٹھانے سے قبل وہاں موجود شرکاء کو وارننگ دینی چاہیے ۔

عبداللہ ریاض نے کہا کہ یوں بغیر وارننگ کے کسی طالب علم پر مائیک پھینکنا اس طالب علم کی بے عزتی ہے جو اپنے دوستوں کے سامنے ہے، اور اس کے قانونی حقوق کے خلاف ہے۔

کنسرٹ میں شریک عبداللہ نے اپنی بات کے اختتام میں کہا کہ بلال سعید کو اپنی انا کی وجہ سے پورا کنسرٹ خراب نہیں کرنا چاہیے تھا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button