فن اور فنکار

عامر خان اور رینا دتا کی گہری محبت کا ’بدترین‘ انجام

1988ء میں عامر خان جب بطور ہیرو اپنی پہلی فلم ’’قیامت سے قیامت تک‘‘ میں جلوہ گر ہو کر بولی وڈ کی رنگین دنیا میں اداکار بن کر قدم رکھا تو کوئی نہیں جانتا تھا کہ اس نئے نوجوان ہیرو کی پریم کہانی پہلے ہی شروع ہوچکی تھی۔

’’قیامت سے قیامت تک‘‘ میں چھوٹا سا مہمان کردار نبھانے والی رینا دتہ سے عامر خان 21برس کی عمر میں 1986ء میں شادی کر چکے تھے لیکن اداکاری شروع کرنے سے پہلے انہوں نے اپنی شادی کا اعلان نہیں کیا تھا۔

یوں کہہ لیجئے کہ عامر خان کی پہلی محبت اور شادی بھی کافی فلمی انداز میں پروان چڑھی۔ عامر خان اور رینا دتہ دونوں ایک دوجے کی محبت میں شدت سے گرفتار تھے لیکن دونوں کے والدین ظالم سماج کا کردار ادا کر رہے تھے اور اس محبت کے سخت خلاف تھے۔

تاہم عامر اور رینا نے فیصلہ کیا کہ جب پیار کیا تو ڈرنا کیا، دونوں نے خفیہ طور پر شادی کرلی اور اس بات کی خبر کسی کے کانوں میں نہیں جانے دی۔ عدالت میں جا کر رینا اور عامر نے کورٹ میرج تو کرلی تھی لیکن دونوں ابھی اپنے اپنے گھروں میں ہی رہ رہے تھے

رینا کی بہن کو جب شک ہوا تو دونوں پیار کے پنچھیوں نے اپنے والدین کا سامنا کرنے کا فیصلہ کیا۔ شادی کی خبر سن کر عامر خان کے والد فلمساز طاہر حسین تو اپنے بیٹے کی شادی کا فلمی فیصلہ دیکھ کر خوشی سے راضی ہوگئے لیکن رینا کے والد ین پر جیسے بجلی ہی گر پڑی تھی۔ ’’قیامت سے قیامت‘‘ کے بعد چونکہ عامر خان کی مقبولیت میں تیزی سے اضافہ ہونے لگا تھا، اس لیے رینا کے گھر والوں کا غصہ بھی داماد کی کامیابی دیکھ کر ٹھنڈا ہوگیا۔ عامر خان نے جب رینا سے شادی کا اعلان کر دیا تھا تو ایک انٹرویو میں انہوں نے بتایا کہ وہ رینا کے حس مزاح کی وجہ سے ان کی جانب راغب ہوئے تھے۔ انہوں نے کہا ’’رینا 18برس کی تھی اور میں 20برس کا تھا، جب ہم دونوں کی دوستی ہوئی۔ ایک طرح سے ہم دونوں بڑے بھی ساتھ ہوئے۔‘‘

عامر اور رینا کی قسمت میں ہمیشہ کا ساتھ نہیں لکھا تھا۔ جیسے جیسے وقت گزرتا گیا، ان کی شادی میں مشکلات پیدا ہوتی گئیں۔ عامر کے بہت سے معاشقے آئے دن خبروں کی زینت بننے لگے جن میں اداکارہ پوجا بھٹ اور ممتا کلکرنی سے ان کے رشتے کے سب سے زیادہ چرچے ہوئے۔ عامر خان کی شادی اس وقت ٹوٹنے کے در پر آ گئی جب مسٹر پرفیکشنسٹ اور برطانوی صحافی جیسیکا ہائنز کے درمیان رومانوی تعلق کی خبریں حقیقت کے روپ میں رینا دتہ کے سامنے آنے لگیں۔

16برس تک عامر خان اور رینا دتہ ساتھ رہے، ان کے دو بچے جنید اور ایرا بھی ہیں۔ بالٓاخر 2002ء میں عامر اور رینا کی طلاق ہوئی۔ دونوں نے اپنی طلاق کے دوران ایک دوسرے پر میڈیا میں کیچڑ نہیں اچھالا بلکہ انتہائی باوقار انداز میں دونوں نے اپنے راستے الگ کر لیے اور مل کر بچوں کی پرورش کا فیصلہ کیا۔

عامر خان کی جانب سے میڈیا کو مختصر بیان جاری کیا گیا جس میں کہا گیا تھا کہ ناقابل مفاہمت اختلافات کی بنا پر ان کی شادی ختم ہوچکی ہے۔ اس دوران عامر خان شدید ذہنی دباؤ میں تھے اور انہوں نے فلموں سے دوری اختیار کر لی تھی۔

بچوں کی تحویل کیوں کہ مکمل طور پر رینا کو دی گئی تھی، اس لیے بھی عامر تکلیف میں تھے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button