دنیا

اسرائیل غزہ کی مٹی میں ڈوب رہا ہے، سامی ابو زہری

حماس کے اہم رہنما ڈاکٹر سامی ابو زہری نے کہا ہے کہ اسرائیل غزہ کی مٹی میں ڈوب رہا ہے، امریکی انتظامیہ غزہ کے خلاف جارحیت میں شراکت دار ہے۔

عرب ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے ڈاکٹ سامی ابو زہری نے کہا کہ امریکی انتظامیہ اپنی غلطی تسلیم کرے، امریکا اپنے غلط مؤقف کا ازسرنو جائزہ لے، امریکی غلط مؤقف کے باعث اسرائیل غزہ میں بڑے جرائم کا مرتکب ہوا۔

انہوں نے کہا کہ امریکا کو غزہ میں جنگ بندی کے لیے کام کرنا چاہیے، صہیونی فوج نے امریکی، مغربی حمایت سے غزہ میں 30 ہزار فلسطینی قتل کیے۔

ڈاکٹر سامی ابو زہری کا کہنا ہے کہ حماس اسرائیلی قبضہ ختم کرنے کے لیے بہت مضبوط ہے، حماس فلسطینی عوام اور قوم کا لازمی حصہ ہے، اسرائیل جارحیت کی قیمت ادا کرنے سے پہلے اپنے قیدی زندہ نہیں نکال سکے گا۔

حماس کے اہم رہنما نے کہا کہ حماس اپنے فلسطینی عوام کے خلاف جارحیت روکنے کے لیے کوشاں ہے، ہم اسرائیلی جارحیت کے خاتمے سے پہلے کسی معاہدے تک نہیں پہنچ سکتے۔

ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ امریکی انتظامیہ جان لے، قومی آزادی کی تحریک میں حماس اپنے لوگوں کے حقوق سے دستبردار نہیں ہو گی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button