پاکستان

وزیر اعظم ہاؤس کے چائے کے کپ کس ملک کی کمپنی بناتی ہے؟

پاکستان میں مہنگائی٬ بے روزگاری٬ معاشی بدحالی اور غربت کسی سے ڈھکی چھپی نہیں۔ لیکن اس ملک کو چلانے والا عوام کا نمائندہ سب سے بڑا دفتر یعنی وزیر اعظم ہاؤس ان تمام الفاظ اور حالتوں سے نا آشنا ہے۔ وہاں دولت کی یوں فراوانی ہے کہ ٹی سیٹ تک بیرون ملک کی ایک کمپنی سے سپیشل بنوائے جاتے ہیں اور ڈالروں کے عوض منگوائے جاتے ہیں۔ یہ انکشاف صحافی محمد عرفان صدیقی نے اپنے کالم میں ازراہ تحریر ہی کیا ہے۔ وہ حال ہی میں نگران وزیر اعظم سے ملاقات کرنے وزیر اعظم ہاؤس پہنچے تھے۔ وہ لکھتے ہیں کہ دو تین چیک پوسٹوں اور خوبصورت راہداریوں سے ہوتے ہوئے میں وزیر اعظم ہاؤس میں داخل ہوچکا تھا،وزیر اعظم ہاؤس آنے کا یہ میرا پہلا اتفاق تھا لیکن یہاں کی خاص بات یہ تھی موجودہ نگراں وزیر اعظم انوار الحق کاکڑ جو خود ایک سادگی پسند شخصیت کے مالک ہیں ان کے احکامات کے سبب ہی وزیر اعظم ہاؤس سے وہ گہما گہمی اوردکھاوٹ ختم ہو چکی ہے جو ماضی میں یہاں کروڑوں روپے کے اخراجات کرکے کی جاتی تھی۔

گاڑی سے اترتے ہی پروٹوکول آفیسر احترام کے ساتھ انتظار گاہ تک چھوڑنے آئے جہاں بسکٹس اور کافی سے تواضع کی گئی، وزیر اعظم کسی اور میٹنگ میں مصروف تھے لہذا میرے پاس وقت تھا میں نے اس انتظار گاہ کا مشاہد ہ شروع کیا، انتظار گاہ کیا تھی یہ بھی ایک خوبصورت کمرہ تھا اور یہاں بھی وزیر اعظم بعض اوقات مہمانوں سے ملاقاتیں کرتے ہونگے یہی وجہ تھی کمرے کے درمیان میں ایک بڑی سرکاری کرسی موجود تھی اور دونوں طرف مہمانوں کے لیے آرام دہ کرسیاں تھیں۔

کافی پیتے ہوئے مجھے کپ سے کچھ انسیت محسوس ہوئی یا دیکھا بھالا لگا تو میں نے کپ کے نیچے موجود پرچ کو پلٹ کر دیکھا تو خوشی ہوئی کہ یہ کپ جاپان کی عالمی شہرت یافتہ کمپنی نوری تاکے کا تیار کردہ تھا جو دنیا بھر کے صدور اور وزرائے اعظم ہاؤس کے لیے ڈنر سیٹ اور ٹی و کافی سیٹ تیار کرتی ہے، ماضی میں نوری تاکے نے پاکستان میں سرمایہ کاری کرنے میں دلچسپی کا اظہار کیا تھا لیکن ہمارے ملک میں غیر ملکی سرمایہ کاروں کے لیے ابھی تک ون ونڈو آپریشن نہ ہونے کے سبب ان کی درخواست بھی سرکاری فائلوں میں کہیں گم ہوچکی ہوگی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button