تازہ ترینخبریںدنیا

غزہ میں اسرائیلی وزیر کے بیٹے اور بھتیجے سمیت مزید پانچ اسرائیلی فوجی ہلاک

اسرائیلی میڈیا نے اطلاع دی ہے کہ اسرائیلی فوج کے غزہ کی پٹی میں لڑائی کے دوران مزید متعدد فوجی مارے گئے ہیں۔ ہلاک ہونے والوں میں ایک اسرائیلی وزیرکا بیٹا اور ایک اس کا بھتیجا بھی شامل ہیں۔

’آئی 24 نیوز‘ ٹی وی نے ہفتے کے روز اطلاع دی ہے کہ اسرائیلی فوج نے غزہ کی پٹی میں اپنے پانچ فوجیوں کی ہلاکت کا اعتراف کیا ہے، جس سے پٹی میں زمینی کارروائیوں کے آغاز سے اب تک فوج کی ہلاکتوں کی کل تعداد 97 ہو گئی ہے۔

ٹائمز آف اسرائیل اخبار کے مطابق فوج نے کہا کہ غزہ میں جمعہ اور ہفتے کے دن 12 فوجی شدید زخمی ہوئے۔ ان کا تعلق فوج کی مختلف یونٹوں سے تھا۔

اخبار نے وضاحت کی کہ نئے ہلاک ہونے والوں میں اسرائیلی فوج کے سابق چیف آف اسٹاف اور موجودہ جنگی کونسل کے وزیر گیڈی آئزن کوٹ کا بھتیجا بھی شامل ہے۔ چند روز قبل اس کا ایک بیٹا بھی غزہ جنگ میں ہلاک ہوگیا تھا۔

وزیر گیڈی آئزن کوٹ 7 اکتوبر کو حماس کے حملے کے بعد وزیر کے طور پر جنگی کابینہ میں شامل ہوئے اور جنگی کابینہ کے اجلاسوں میں شرکت کی۔ وہ بینی گینٹز کی سربراہی میں نیشنل یونٹی پارٹی کے رکن ہیں اور 2022ء میں کنیسٹ کے رکن منتخب ہوئے تھے۔

دوسری جانب القسام بریگیڈز کا کہنا ہے کہ اس کے جنگجوؤں نے الزیتون محلے میں ایک عمارت کو دھماکے سے اڑا دیا جس میں اسرائیلی فوجی چھپے ہوئے تھے۔ اس حملے میں متعدد اسرائیلی فوجی ہلاک اور زخمی ہوگئے۔

اسرائیل کے قومی سلامتی کے مشیر نے کہا ہے کہ غزہ جنگ کے دوران کم از کم 7000 فلسطینی عسکریت پسند مارے گئے۔

انہوں نے مزید کہا کہ "شمال میں اپنے شہریوں کو لاحق خطرے کو روکنے کے لیے ہمیں حزب اللہ کے خلاف کارروائی کرنا ہو گی”

غزہ کی پٹی میں وزارت صحت نے ہفتے کی شام اعلان کیا کہ 7 اکتوبر سے پٹی پر اسرائیلی حملوں میں مرنے والوں کی تعداد 17,700 ہو گئی ہے جب کہ 48,780 دیگر زخمی ہوئے ہیں۔

وزارت صحت نے روزانہ کی بریفنگ میں مزید کہا کہ گذشتہ گھنٹوں کے دوران مزید 210 فلسطینی شہید اور 2300 زخمی ہسپتالوں میں لائے گئےجبکہ متاثرین کی بڑی تعداد ملبے کے نیچے اور سڑکوں پر دبی ہوئی ہے۔

وزارت صحت نے کہا کہ شمالی غزہ کی پٹی میں ایک اسکول میں "اسرائیلی قتل عام” میں درجنوں افراد شہید اور زخمی ہوئے۔ وہاں کے بے گھر افراد "تباہ کن صورتحال” میں ہیں۔

انہوں نے وضاحت کی کہ زخمیوں کو "شمالی غزہ کی پٹی میں اسرائیل کے ہسپتالوں کے محاصرے کی وجہ سے مرنے کے لیے چھوڑ دیا گیا ہے”۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button