تازہ ترینخبریںدنیا

پتا ہوتا اسرائیلی فوج اتنی کمزور ہے تو سیدھا تل ابیب پر حملہ کرتے: حماس رہنما

حماس کے ایک سینئر رہنما محمد ابو مرزوق نے کہا ہے کہ اگر انھیں پہلے پتا ہوتا کہ اسرائیلی فوج اتنی کمزور تو تنظیم سیدھا تل ابیب پر حملہ کرتی۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق حماس کے سینئررہنما موسیٰ محمد ابو مرزوق نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اسرائیلی فوج اتنی کمزور ہے، اگر یہ حقیقت 7 اکتوبر کو پتا ہوتی تو سیدھا تل ابیب پر حملہ کرتے۔

انھوں نے کہا خطے کی سپر پاور کا غرور جنگجوؤں نے صرف 5 گھنٹے میں خاک میں ملا دیا۔

عرب رہنماؤں سے گلہ کرتے ہوئے موسیٰ محمد ابو مرزوق کا کہنا تھا کچھ عرب رہنما حماس کا خاتمہ چاہتے ہیں اور مغرب کو اس کے لیے اکساتے ہیں، تاہم مغربی کنارے کے بھائیوں اور حزب اللہ سے زیادہ امیدیں ہیں۔

ادھر عرب میڈیا نے خبر دی ہے کہ آج پیر کو اسرائیلی فوج نے ٹینکوں کے ساتھ غزہ شہر پر بڑا حملہ کیا، جس کے بعد غزہ کے نواحی علاقے میں فلسطینی مجاہدین اور اسرائیلی فوج میں شدید جھڑپیں ہوئیں، اسرائیلی ٹینک غزہ شہر کے نواحی علاقے صلاح الدین تک پہنچ گئے تھے، اور شاہراہ صلاح الدین سے گزرنے والی گاڑیوں پر ٹینکوں سے گولہ باری کی گئی۔

ترجمان حماس نے کہا کہ فلسطینی مزاحمت کاروں نے صلاح الدین میں اسرائیلی ٹینکوں پر حملہ کیا، اور غزہ شہر پر اسرائیلی ٹینکوں کا حملہ پسپا کر دیا گیا ہے، اسرائیلی ٹینک پیچھے ہٹنے پر مجبور ہو گئے، ٹینکوں نے اس دوران 2 شہریوں کی گاڑیوں پر گولے برسائے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button