تازہ ترینخبریںپاکستان

کالعدم ٹی ٹی پی اور داعش کی بڑھتی دہشت گردی عالمی امن کیلئے خطرہ ہے

 نگراں وزیراعظم انوار الحق کاکڑ کا کہنا ہے کہ کالعدم ٹی ٹی پی اور داعش کی بڑھتی دہشت گردی عالمی امن کیلئے خطرہ ہے، افغانستان میں استحکام نہ آیا تو عالمی امن کیلئے چیلنج بن جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق نیویارک میں نگراں وزیراعظم انوار الحق کاکڑ نے کونسل آف فارن ریلیشنز کے سوال وجواب سیشن میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ منتخب حکومت کے آنے تک نگراں حکومت آئینی حیثیت رکھتی ہے اور نگراں حکومت آزادانہ و غیرجانبدارانہ انتخابات کرانے کا مینڈیٹ رکھتی ہے۔

انوار الحق کاکڑ کا کہنا تھا کہ انتخابات سے متعلق الیکشن کمیشن تاریخ اورشیڈول کااعلان کرتا ہے اور الیکشن کمیشن کےمطابق آئندہ عام انتخابات جنوری میں ہوں گے، مستحکم اورجمہوری پاکستان ہماری ترجیح ہے۔

افغانستان سے متعلق انھوں نے کہا کہ موجودہ افغان حکومت کیساتھ بعض معاملات پرتعاون کی فضاموجودہے، کالعدم ٹی ٹی پی وداعش کی بڑھتی دہشت گردی عالمی امن کیلئےخطرہ ہے۔

نگراں وزیراعظم نے بتایا کہ پاکستان میں یومیہ بنیاد پر ہمارے بہادر فوجی اور عوام دہشت گردی کا نشانہ بن رہے ہیں، ہم افغانستان میں پائیدار امن چاہتے ہیں، افغانستان میں استحکام نہ آیا تو ہمسایہ ملکوں سمیت عالمی امن کیلئے بھی چیلنج بن جائے گا۔

پاک امریکا تعلقات کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان امریکا تعلقات کئی دہائیوں پر محیط ہیں جو پھلتے پھولتے رہیں گے، امریکا اور پاکستان کے مشترکہ اقدار ہیں اور دونوں ممالک کے طویل مدتی تعلقات 76 برس پرمحیط ہیں، امریکا کیساتھ وسیع البنیاد،دیرپاتعلقات میں گرمجوشی دیکھنےمیں آرہی ہے، یقینی بنائیں گے کہ ہماری حکومت میں تمام پاکستانیوں کی نمائندگی ہو۔

افغانستان سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ موجودہ افغان حکومت کیساتھ بعض معاملات پرتعاون کی فضاموجودہے، کالعدم ٹی ٹی پی وداعش کی بڑھتی دہشت گردی عالمی امن کیلئےخطرہ ہے۔

انھوں نے بتایا کہ پاکستان میں یومیہ بنیاد پر ہمارے بہادر فوجی اور عوام دہشت گردی کا نشانہ بن رہے ہیں، ہم افغانستان میں پائیدار امن چاہتے ہیں، افغانستان میں استحکام نہ آیا تو ہمسایہ ملکوں سمیت عالمی امن کیلئے بھی چیلنج بن جائے گا۔

انوار الحق کاکڑ نے مزید کہا کہ ہمارے قومی شاعرعلامہ اقبال نے افغانستان کو ایشیا کا دل قرار دیا تھا اور کسی جسم کادل خرابی کاشکار ہو تو اثرات پورے جسم پر پڑتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button