تازہ ترینخبریںپاکستان سے

پولیس کے غیر قانونی مقیم افغانیوں سے متعلق تہلکہ خیز انکشافات

کراچی پولیس نے اعلیٰ حکام کو خط کے ذریعے شہر قائد میں مقیم غیر قانونی افغانیوں سے متعلق تہلکہ خیز انکشافات کرتے ہوئے انہیں ڈی پورٹ کرنے کی سفارش کی ہے۔

ایس ڈی پی او سہراب گوٹھ سہیل فیض نے ایس ایس پی شرقی کو خط تحریر کیا ہے جس میں افغان شہریوں کے ملک مخالف سرگرمیوں، زمینوں پر قبضے، قتل، منشیات فروشی، اسٹریٹ کرائم اور دیگر جرائم میں ملوث ہونے کا انکشاف کرتے ہوئے انہیں ڈی پورٹ کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔

خط میں یہ بھی انکشاف کیا گیا ہے کہ کراچی کے مختلف علاقوں سہراب گوٹھ فیکٹری ایریا، سبزی منڈی اور اطراف میں روزانہ کی بنیاد پر افغان شہری بڑی تعادد میں آ رہے ہیں، ان لوگوں نے گزشتہ دنوں سپر ہائی وے بلاک کرکے امن وامان کی سنگین صورتحال پیدا کی تھی، شر پسندوں کے خلاف سہراب گوٹھ سمیت ضلع شرقی میں پانچ مقدمات بھی درج ہیں۔

خط کے متن میں مزید کہا گیا ہے کہ تین روز قبل پولیس نے آپریشن کرتے ہوئے دو درجن سے زائد افغان باشندوں کو گرفتار کر کے انکے خلاف فارن ایکٹ کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

مراسلے میں کہا گیا ہے کہ ماضی میں بھی غیر قانونی مقیم اور پاکستان مخالف سرگرمیوں میں ملوث افغانیوں کو ڈی پورٹ کیا جاتا رہا ہے اب دوبارہ ایسا کرنے کی ضرورت ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں سہراب گوٹھ کے قریب پولیس کی بھاری نفری نے مخصوص علاقے کو گھیرے میں لے کر غیر قانونی مقیم افغان شہریوں کے خلاف آپریشن شروع کر دیا۔

ڈی ایس پی چوہدری سہیل فیض نے بتایا تھا کہ سہراب گوٹھ کے مخصوص علاقوں میں کومبنگ آپریشن آئی جی اور ڈی آئی جی کے احکامات پر ہو رہا ہے، گزشتہ رات 26 گرفتاریاں ہوئیں، اور آج مزید 15 افغان شہریوں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button