24 اگست 2019
تازہ ترین
داتا دربار دھماکے کا گرفتار مبینہ سہولت کاررہا

داتا دربار دھماکے کا گرفتار مبینہ سہولت کاررہا

ایمن آباد کے رہائشی ذیشان کو داتا دربار خود کش حملے کی سہولت کاری کے الزام میں گزشتہ دنوں حراست میں لیا گیا تھا۔ذرائع سی ٹی ڈی کے مطابق ملزم ذیشان پر حملہ آور کے سہولت کار ہونے کا شبہ ظاہر کیا گیا تھا لیکن اس نے اپنے ویڈیو پیغام میں خود پر لگنے والے الزام کی تردید کی تھی۔ تاہم ذیشان کا موبائل فون اور 2 سمز فرانزک کیلئے بھجوا دی گئی ہیں۔ خیال رہے کہ انسداد دہشت گردی ڈیپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) نے داتا دربار خود کش حملے کے بعد کارروائی کرتے ہوئے ذیشان نامی شخص کو حراست میں لیا تھا۔ کہا جا رہا تھا کہ وہ خود کش حملے کا سہولت کار ہے۔ سی ٹی ڈی نے گوجرانولہ کے علاقے ایمن آباد میں ملزم ذیشان کو اس کے گھر سے حراست میں لیا۔ دوسری جانب گرفتاری سے پہلے ذیشان نے اپنے ویڈیو پیغام میں کہا تھا کہ اس کا دہشت گرد حملے سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ اس کی کریانے کی دکان ہے۔مبینہ سہولت کار کا کہنا تھا کہ دھماکے کے وقت وہ دربار کے اندر موجود تھا اور ڈر کے باہر بھاگا، ویڈیو میں دیکھ کر اُسے حملہ آور کا سہولت کار سمجھا جا رہا ہے۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟