30 ستمبر 2020
تازہ ترین
محمد حفیظ نے پاکستان کرکٹ بورڈ سے کنٹریکٹ نہ لینے کا فیصلہ کرلیا  

محمد حفیظ نے پاکستان کرکٹ بورڈ سے کنٹریکٹ نہ لینے کا فیصلہ کرلیا  

 قومی کرکٹ ٹیم کے سینئر کھلاڑی محمد حفیظ نے پاکستان کرکٹ بورڈ سے کنٹریکٹ نہ لینے کا فیصلہ کرلیا  اور بورڈ سے معذرت کرلی ۔  ذرائع  کے مطابق پی سی بی نے 39 سالہ محمد حفیظ کو ایک لاکھ سے زائد کا ماہانہ کنٹریکٹ آفر کیا تھا لیکن پروفیسر نے فیصلہ کیا کہ یہ کنٹریکٹ کسی نوجوان کرکٹر کو مل جائے۔ محمد حفیظ کے دستبردار ہونے کے بعد اب حفیظ کو ریٹینر کنٹریکٹ دیا جائےگا جس میں انہیں تنخواہ تو نہیں ملے گی تاہم میچ فیس اور ڈیلی الائونس دیئے جائیں گے۔ یاد رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے کوچزکے ساتھ ساتھ کرکٹرزکوبھی فرمانبردار بنانے کا پلان بنالیا ہے۔ ذرائع کے مطابق ستمبر کے تیسرے ہفتے مجوزہ ڈومیسٹک سیزن کے لیے معاہدوں کا ڈرافٹ مزید سخت بنانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ کوئی بھی کھلاڑی اور آفیشل بغیر معاہدے پردستخط کے کسی ایونٹ میں شریک نہیں ہوسکے گا، گزشتہ برس بعض کرکٹرز نے ایگزیمنٹ سائن کیے بغیر ایونٹ میں شرکت کی تھی تاہم اس بارمجوزہ ایگریمنٹ کی شقوں کے تحت سب کرکٹرز کو پی سی بی کے کوڈ آف ایتھکس کا پابند کیا جائے گا۔ مختلف محکموں سے وابستہ کرکٹرز اورمیچ آفیشلز کے لیے الگ کنٹریکٹ ہوگا ۔پی سی بی کنٹریکٹ سائن کرنے کے بعد کوئی اورکنٹریکٹ قبول کرنے سے پہلے انہیں بورڈ کا این اوسی لینا ضروری ہوگا۔                      


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا آپ کووڈ 19 کے حوالے سے حکومتی اقدامات سے مطمئن ہیں؟