10 دسمبر 2019
تازہ ترین
آئی پی پیز کی مسائل حل نہ ہونے پر ثالثی عدالت جانے کی دھمکی

آئی پی پیز کی مسائل حل نہ ہونے پر ثالثی عدالت جانے کی دھمکی

حکومت کو پاور پروڈیوسرز کمپنیوں کی جانب سے نئے چیلنج کا سامنا ہے کیونکہ آئی پی پیز نے مسائل حل نہ ہونے پر ثالثی عدالت جانے کا اعلان کر دیا ہے۔ آئی پی پیز ایسوسی ایشن کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ملک میں 50 فیصد بجلی پیدا کر رہے ہیں لیکن حکومت نے 22 کمپنیوں کو 375 ارب کی ادائیگی کرنی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ حکومت کمپنیاں بند کرنا چاہتی ہے تو کر دے، منافع کے حوالے سے تمام تفصیلات شئیر کرنے کے لئے تیار ہیں۔ ایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ ماضی میں ملک میں بجلی کی پیداوار کے لئے فیول کا انتخاب بدتر تھا۔ قرضوں کی تحقیقات کرنے والے کمیشن کو بریفنگ دیدی، ہر فورم پر جا سکتے ہیں۔ ہمارا کنٹریکٹ ہمیں ثالثی عدالت میں جانے کی اجازت دیتا ہے۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟