پی پی اراکین اسمبلی سے اضافی سیکیورٹی واپس

پی پی اراکین اسمبلی سے اضافی سیکیورٹی واپس

  آئی جی سندھ کلیم امام کی ہدایت پر پیپلز پارٹی کے کئی ارکان قومی و صوبائی اسمبلی سمیت متعدد اہم شخصیات سے سیکیورٹی واپس لے لی گئی۔ حکومتی، سیاسی اور دیگر شخصیات کی سیکیورٹی پر پولیس ہیڈ کوارٹر سے اہلکار تعینات تھے جنہیں آئی جی سندھ کی ہدایت پر واپس ہیڈ کوارٹر طلب کر لیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق پیپلز پارٹی کے جن اراکین سے اضافی سیکیورٹی واپس لی گئی ہے ان میں وزیر بلدیات سندھ سعید غنی اور صوبائی وزیر شہلا رضا بھی شامل ہیں۔ ذرائع کا بتانا ہے کہ دونوں وزرائ کو دی گئی اضافی پولیس موبائلز کو ہیڈ کوارٹر طلب کر لیا گیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ دونوں وزرائ کی زندگیوں کو درپیش خطرات کے پیش نظر خصوصی خط جاری کیا گیا تھا اور وزیراعلیٰ سندھ کے حکم پر ان شخصیات کو اضافی سیکیورٹی فراہم کی گئی تھی۔ وزیر بلدیات سندھ سعید غنی کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ پولیس سے کبھی اضافی سیکیورٹی نہیں مانگی، مجھے اور شہلا رضا کو پولیس نے سیکیورٹی خدشات سے متعلق آگاہ کیا تھا، پولیس نےخود ہی ہماری سیکیورٹی میں اضافہ کیا اور اب سیکیورٹی واپس لے لی گئی۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا آپ کووڈ 19 کے حوالے سے حکومتی اقدامات سے مطمئن ہیں؟