21 نومبر 2018
تازہ ترین
ہرتیک روشن کے خلاف مقدمہ درج

 نامور بالی وڈ اداکار ہرتیک روشن سمیت 8 لوگوں کے خلاف دھوکہ دہی کے الزام میں ایف آئی آر درج کرلی گئی ۔ بھارتی میڈیا کے مطابق اداکار ہرتیک روشن سمیت 8 افراد پر بھارتی سیلز مین مرلی دھرن نے دھوکا دہی کے الزام میں  ایف آئی آر درج کروائی ہے۔ مرلی دھرن نے موقف اختیار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ کپڑوں کے ایک نامور برانڈ مرچنڈائز میں بطور تھرڈ پارٹی سیلز مین کام کر رہا تھا اس برانڈ کو بھارت میں 2014 میں ہرتھیک روشن نے متعارف کرایا تھا۔ مرلی دھرن نامی شہری نے کمپنی پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ اس نے بینک سے قرض لے کر کمپنی سے مال اٹھایا ہوا تھا  جس کی وجہ سے اس پر 21 لاکھ کا قرض چڑھ گیا تھا،  تاہم جب کپڑوں کی فروخت بند ہوگئی، تو اس نے کمپنی کو سارا مال واپس بھجوایا لیکن کمپنی کی جانب سے اسے رقم نہیں بھجوائی گئی۔ لہٰذا اس نے ہرتیک روشن سمیت کمپنی کے دیگر 8 افراد پر دھوکہ دہی کے الزام میں دسمبر 2014 میں شکایت درج کرائی تھی ،تاہم پولیس نے شکایت کنندہ کی جانب سے عدالت سے رجوع کرنے پر کیس رجسٹرڈ کیا ہے۔ اداکار ہرتیک روشن کو قانونی نوٹس بھی جاری کیا گیا ہے، جس پر ہرتھیک روشن کی جانب سے ردعمل دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ وہ اس کمپنی کے صرف برانڈ ایمبسیڈر ہیں اور کسی بھی نقصان کے ذمہ دار نہیں ہیں۔  


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟