23 ستمبر 2018
کشمیر کمیٹی سے فضل الرحمان کو ہٹایا جائے ، علی گیلانی

۔سری نگر میں اپنے انٹروےو میں سےد علی شاہ گےلانی نے کہا ہے کہ قومی اسمبلی کی کشمےر کمےٹی فعال کردار ادا کرنے میں ناکام ہوگئی ہے حکومت پاکستان کی کشمےر کمےٹی میں اےسے لوگ ہیں جو مسئلہ کشمےر سے واقف نہیں کشمےر کمےٹی کو دےکھ کر پاکستان کا مسئلہ کشمےر پر سنجےدگی کا اندازہ ہو رہا ہے انہوں نے کہا کہ بےرونی محاذ پر  وزےر اعظم نواز شرےف نے جرت مندانہ موقف اختےار کیا لیکن پاکستان میں کشمےر کمےٹی کو دےکھ کر لگ رہا ہے کہ حکومت کے پاس اےسے لوگ نہیں جو مسئلہ کشمےر پر پاکستان کے قومی موقف کی قےادت کرےں ۔سےد علی شاہ گےلانی نے کہا ہے کہ وزےر اعظم نواز شرےف پر کرپشن کے الزامات سے ان کی پوزےشن کمزور ہوئی ہے مسئلہ کشمےر پر قومی کشمےر کمےٹی کے سربراہ اور ممبران مسئلہ کشمےرکو نہیں سمجھتے لہٰذا کشمےر کمےٹی کی از سر نو تشکےل کرتے ہوئے اےسے افراد کا چناؤ کیاجائے جو مسلہ کشمےر سے واقف ہوں کشمےر کمےٹی کو فعال کیا جائے سےد علی شاہ گےلانی نے کہا کہ کشمےر کمےٹی میں اےسے لوگ لائے جائےں جو ہندو ذہنےت کو سمجھتے ہوں تاکہ مسلہ کشمےر کو جرات مندانہ موقف کے ساتھ دنےا کے سامنے اٹھاےا جا سکے،اہل افرادآگے آئےں تواچھے نتائج برآمد ہوسکتے ہےں۔  


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟