12 نومبر 2018
 کراچی میں بنیادی سہولتوں کا فقدان لمحہ فکریہ،وزیراعظم

 وزیراعظم عمران خان  نے کہا  ہے کہ کراچی جیسے اہم شہر میں بعض  بنیادی سہولتوں کا فقدان لمحہ فکریہ ہے لہٰذا شہر کے عوام کے مسائل سے متعلق علم ہے۔ وزیراعظم عمران خان سے وزیراعظم ہائوس میں اتحادی جماعت ایم کیوایم پاکستان کے رہنمائوں نے ملاقات کی جن میں وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی خالد مقبول صدیقی اور وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم کے علاوہ امین الحق، کنور نوید، نسرین جلیل اور میئر کراچی وسیم اختر بھی شامل تھے جب کہ ملاقات میں وزیراعظم کے معاون خصوصی نعیم الحق اور گورنر سندھ عمران اسماعیل بھی خصوصی طور پر شریک ہوئے۔ وزیراعظم اور ایم کیو رہنمائوں کی ملاقات کے دوران سیاسی امور اور صدارتی انتخاب سمیت سندھ کے مسائل پر تفصیلی گفتگو ہوئی۔ ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے ایم کیوایم کے وفد کو کراچی اور حیدرآباد کے مسائل حل کرانے کے لیے تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ ذرائع کا کہناہے کہ ایم کیوایم کے وفد نے وزیراعظم کو صدارتی انتخابات میں پی ٹی آئی کے امیدوار عارف علوی کی حمایت کا بھی یقین دلایا۔ دوسری جانب وزیراعظم عمران خان سے گورنر سندھ عمران اسماعیل نے بھی علیحدہ ملاقات کی جس میں انہوں نے حکومت کی جانب سے اعتماد کا اظہار اور اہم ذمہ داری دینے پر شکریہ ادا کیا۔ اس کے علاوہ وزیراعظم اور گورنر سندھ کی ملاقات میں سندھ اور خصوصاً کراچی کی موجودہ صورتحال اور عوامی مسائل پر گفتگو کی گئی۔ اس موقع پر وزیراعظم کا کہنا تھاکہ شہر قائد کی عوام کے مسائل سے متعلق علم ہے، کراچی جیسے اہم شہرمیں بعض مقامات پر بنیادی سہولتوں کا فقدان لمحہ فکریہ ہے، ملکی معیشت کی ترقی و استحکام میں کراچی کا کردار کلیدی ہے۔ عمران خان نے کہاکہ کراچی میں امن و امان کی فضا کو مزید مستحکم کرنے کے لیے پر عزم ہیں، حکومت عوام کو درپیش مسائل کے مستقل حل کے لیے ہر ممکن تعاون فراہم کرے گی۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟