15 نومبر 2018
تازہ ترین
 ڈر گ ٹیسٹنگ لیبارٹری لاہور کا سارا عملہ فارغ

۔ تفصیلات کے مطابق دل کے مریضوں کو جعلی سٹنٹ لگائے جانے کے معاملے پر ڈر گ ٹیسٹنگ لیبارٹری مکمل طور پر ناکام رہی جبکہ دیگر ادویات کی جانچ کرنے میں بھی عملے نے کاہلی کا مظاہرہ کیا جس کی وجہ سے ہزاروں لوگوں کی زندگیاں دار لگ گئیں ۔ عملے کی غفلت سامنے آنے پر وزیر اعلیٰ نے نوٹس لیا اور لیبارٹری کے ڈائریکٹر ڈاکٹر معین سمیت پورے عملے کو فارغ کرکے نیا عملہ تعینات کر دیا۔ پروفیسر ڈاکٹر شفیق الرحمان ڈر گ ٹیسٹنگ لیب کے نئے ڈائریکٹر ہوں گے جبکہ دیگر عملہ بھی پنجاب فر انز ک ایجنسی سے تربیت یافتہ ہے، نئے عملے کو تربیت کیلئے بیرون ملک بھی بھیجو ا یا جائے گا۔ وزیر اعلیٰ شہباز شریف نے کہا ہے کہ ڈر گ ٹیسٹنگ لیبارٹری کا پرانا عملہ معیاری ادویات کی فراہمی میں رکاوٹ بنا جس کے باعث انہیں فارغ کرکے نیا عملہ تعینات کرد یا ہے۔ نیا عملہ تعینات کرکے نئی بنیاد رکھ دی اور ماضی کا گلا سڑا اور کرپشن زدہ نظام دفن کر دیا۔  


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟