21 ستمبر 2018
تازہ ترین
چینی انجینئر نے موبائل فون چارج کرنے والا اسمارٹ لباس تیار کرلیا

اگرچہ اس سے قبل بھی بجلی پیدا کرنے والے لباس اور کپڑے منظرِ عام پر آتے رہے ہیں لیکن اب چین کی جینان یونیورسٹی نے ایسا پارچہ تیار کیا ہے جسے کاٹا اور سیا جاسکتا ہے  اور وہ سورج کی روشنی جذب کرکے بجلی بناتا ہے۔ چینی انجینئروں نے 2 طرح کا کپڑا بنایا ہے جن میں ایک میں ٹائٹانیئم یا مینگنیز پالیمر کو زند آکسائیڈ اور ایک الیکٹرولائٹ ( برقیرہ) لگایا ہے۔ اس کے بعد پالیمر کو تانبے سے ڈھانپا گیا ہے جو سولر (شمسی) سیل کا کام کرتا ہے۔

 

دوسرے قسم کے کپڑے میں ٹائٹانیئم اور ٹائٹانیئم نائٹریٹ، کاربن کی پتلی تہہ اور ایک الیکٹرولائٹ شامل کیا گیا ہے۔ اس پارچے کو عام کپڑے کے ساتھ بہ آسانی سیا جاسکتا ہے۔ اس طرح ان پارچوں سے کپڑے بنا کر ان سے بجلی حاصل کرکے اس سے چھوٹے آلات مثلاً ٹیبلٹ، فون اور ایم پی تھری پلیئرز چارج کیے جاسکتے ہیں اور اسے کپڑے کی بجائے ’’سیا جانے وانے والا ایک آلہ‘‘ قرار دیا جارہا ہے۔

اس کپڑے کو بنانے والے انجینئر کا کہنا ہےکہ اسے بڑے پیمانے پر کسی کارخانے میں آسانی سے تیار کیا جاسکتا ہے، اس سے اسمارٹ فون کےعلاوہ کھال پر چپکنے والے طبی آلات کو بہت سہولت سے چارج کیا جاسکتا ہے۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟