21 جولائی 2019
تازہ ترین
پاکستان سٹاک ایکسچینج میں مندی کا رجحان جاری

پاکستان سٹاک ایکسچینج میں مندی کا رجحان جاری

پاکستان سٹاک ایکسچینج میں مندی کا رجحان جاری ہے۔ 100 انڈیکس 36 ہزار 579 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا۔معاشی غیر یقینی اور عالمی مالیاتی ادرے ورلڈ بینک کی پاکستان کی معیشت پر رپورٹ کے بعد بیرونی اور مقامی سرمایا کار پاکستان سٹاک ایکسچینج میں سرمایا لگانے کے بجائے حصص کی فروخت میں زیادہ دلچسپی لے رہے ہیں۔ کاروباری ہفتے کے تیسرے روز پاکستان سٹاک ایکسچینج میں 550 پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی۔ 100 انڈیکس 6 ماہ کی کم ترین سطح 36 ہزار 579 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا۔اسٹاک تجزیہ کاروں کے مطابق حکومت اور آئی ایم ایف کے درمیان معاملات کے حتمی ہونے کے بعد معیشت درست سمت میں جانا شروع ہو جائے گی جس سے سٹاک مارکیٹ میں بھی بہتری کا امکان ہے۔معاشی سست روی کے بادل سٹاک مارکیٹ پر چھانے سے انویسٹرز کے 100 ارب روپے ڈوب گئے۔ رواں مالی سال اب تک سٹاک مارکیٹ 5 ہزار سے زائد پوائنٹس گنوا بیٹھی ہے۔ جولائی سے اب تک انڈیکس 41 ہزار 910 سے گر کر 36 ہزار 579 پوائنٹس پر آ گیا ہے۔ بڑی صنعتوں کی پیداوار میں کمی واقع ہو رہی ہے۔ شرح سود میں مسلسل اضافہ انویسٹرز کو مارکیٹ سے دور کر رہا ہے۔ورلڈ بینک ہو یا آئی ایم ایف کاروباری سرگرمیاں ماند پڑنے کے اعلانات کر رہے ہیں۔ کاروبار کے فروغ کے لیے حکومتی اعلانات سے زیادہ عملی اقدامات لینے کی ضرورت ہے


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟