22 اگست 2019
تازہ ترین
ٹھنڈے پانی، مشروبات کے نقصان دہ اثرات

ٹھنڈے پانی، مشروبات کے نقصان دہ اثرات

اگر آپ میٹھے اور سوڈے والے مشروبات کا زیادہ استعمال کرتے ہیں تو جان لیجئے کہ آپ میں پھیپھڑوں کے دائمی امراض کا خدشہ بڑھ جاتا ہے۔ امریکن کلینیکل جنرل کی تحقیق کے مطابق میٹھے مشروبات کا زیادہ استعمال صحت پر منفی اثرات مرتب کرتا ہے، کچھ مشروبات کا استعمال پھیپھڑوں کو متاثر کرتا ہے، لیکن تحقیق میں سب مشروبات کے نتائج یکساں نہیں ہیں۔ جوہن ہوپکن کی تحقیق کے مطابق 3003 امریکی مرد و خواتین کے پھیپھڑوں پر ریسرچ کی گئی ، مشروبات کے استعمال پر تحقیق  میں 3003 افراد نے مشروبات کا استعمال کیا گیا۔  8 سال تک ان مشروبات کا استعمال کرنے والے 185 افراد کو پھیپھڑوں کا دائمی مرض لاحق ہوا ۔ سوڈا، فروٹ ڈرنکس اور میٹھے مشروبات کا استعمال پھیپھڑوں کے دائمی امراض کے خدشات میں اضافہ کرتا ہے، ان مشروبات کا زیادہ استعمال کرنے والے افراد میں اس بیماری کے بڑھنے کا تناسب 61 فیصد زیادہ ہوتا ہے۔ ماہرین اس با ت پر حیران ہیں کہ پانی بھی اس بیماری کے بڑھنے میں قلیدی کردار ادا کرتا ہے۔ لیکن اب ریسرچرز نے اپنی تحقیق کا دائرہ کار بڑے  پیمانے پر میٹھے پانی تک بڑھانے کا ارادہ کر لیا ۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟