15 نومبر 2019
تازہ ترین
ٹرمپ نے دنیا کو امریکہ  کا اصل چہرہ دکھا دیا، خامنہ ای

ٹرمپ نے دنیا کو امریکہ  کا اصل چہرہ دکھا دیا، خامنہ ای

 ایران کے رہبر اعلیٰ آیت اللہ علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ امریکہ کے نئے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دنیا کو اپنے ملک کا اصل چہرہ دکھا دیا ہے۔  برطانوی خبر ایجنسی کے مطابق انہوں نے یہ بات ایرانی فوجی افسران سے خطاب کے دوران کہی۔ آیت اللہ علی خامنہ ای کا یہ بھی کہنا تھا کہ امریکہ کے نئے رہنما کے اقدامات ان باتوں کا ثبوت ہیں جو کہ ایران 30 برس سے کرتا آیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایران کہتا رہا ہے کہ امریکی انتظامیہ مختلف اقسام کی بدعنوانی کا شکار ہے اور صدر ٹرمپ بھی یہی کہہ رہے ہیں۔ ہم ان ٟ ٹرمپٞ کے شکر گزار ہیں کہ انہوں نے ہماری زندگی آسان بنا دی اور امریکہ کا اصل چہرہ دنیا کو دکھا دیا۔ اپنی انتخابی مہم اور اس کے بعد بھی انہوں نے اس چیز کی تصدیق کی جو ہم تین دہائیوں سے امریکی حکومتی انتظامیہ کی سیاسی، اقتصادی، اخلاقی اور معاشرتی بدعنوانی کے بارے میں کہتے آئے ہیں۔ واضح رہے کہ  علی خامنہ ای کی جانب سے یہ بیان امریکی صدر کی جانب سے ایران اور عالمی طاقتوں کے درمیان جوہری معاہدے پر تنقید اور ایران پر نئی پابندیوں کے نفاذ کے بعد سامنے آیا ہے۔ ایران کا کہنا ہے کہ وہ ایک 'ناتجربہ کار شخص' کی جانب سے امریکہ کی 'بیکار' دھمکیوں کے سامنے نہیں جھکے گا علی خامنہ ای نے یہ بھی کہا کہ کوئی دشمن ایرانی قوم کو مفلوج نہیں کر سکتا۔ وہ ٟ ٹرمپٞ کہتے ہیں کہ ہمیں ان سے خوفزدہ ہونا چاہیے۔ نہیں ایرانی عوام ان کی باتوں کا جواب دس فروری کو دیں گے اور بتا دیں گے کہ ایسی دھمکیوں پر کیسا ردعمل ظاہر کیا جاتا ہے۔ صدر ٹرمپ کی حلف برداری کے بعد اپنی پہلی تقریر میں ایرانی رہبرِ اعلیٰ کا کہنا تھا کہ ایرانی قوم امریکی صدر کی دھمکیوں سے خوفزدہ ہونے والی نہیں ہے۔ امریکی صدر نے 29 جنوری کو ایرانی بیلسٹک میزائل تجربے کے بعد اپنے بیان میں کہا تھا کہ ایران آگ سے کھیل رہا ہے اور کیا وہ اس بات کی قدر نہیں کریں گے کہ صدر اوباما ان کے ساتھ کتنے 'مہربان' تھے۔ لیکن میں نہیں ہوں۔' اس تجربے کے بعد امریکی حکومت نے 13 افراد اور درجن بھر کمپنیوں پر مزید پابندیاں لگا دی تھیں۔ پابندیوں کا شکار ہونے والوں میں سے کچھ کا تعلق ایرانی پاسدارانِ انقلاب سے بھی ہے۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟