08 اپریل 2020
تازہ ترین
 ٹانگیں  کھینچنے کا دور ختم ہوچکاعوام ترقی چاہتے ہیں,حمزہ شہبازشریف

 ٹانگیں کھینچنے کا دور ختم ہوچکاعوام ترقی چاہتے ہیں,حمزہ شہبازشریف

کہ  ٹانگیں کھینچنے کا دور ختم ہوچکاعوام ترقی چاہتے ہیں،عمران خان ہوش کے ناخن لیںوزیراعظم نے خود کو احتساب کیلئے پیش کردیا ہے ۔ انہوںنے اپنا مستقبل عدالت کو سونپ دیا ہے جبکہ عمران خان کے دائیں بائیں کھڑے ہونے والے لوگ عدالتوں سے گھبراتے ہیں ۔ عمران خان دھرنوں اور انتشار کی سیاست کی بجائے خیبرپختونخوا جاکر عوام سے کئے وعدے پورے کریں ۔ دھرنوں اور انتشار کی سیاست سے وزیراعظم نہیں بن سکتا۔ رات کو شب خون مار کر پتلی گلی سے شیروانی سلوا کر وزیراعظم بننے کا دور اب چلا گیا، لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ۔انہوں نے کہا کہ حقائق سے آنکھیں نہیں چرانی چاہیں ادویات کی فراہمی اور صحت کی سہولیات ایک بہت بڑا چیلنج ہے لیکن ہم نے اس چیلنج کو قبول کیا ہے اس پر وزیر اعلیٰ روزانہ کی بنیاد پر میٹنگ کر تے ہیں اس سلسلے میں ہم   نئی حکمت عملی وضع کر رہے ہیں اللہ تعالیٰ نے چاہا تو اس میں خاطر خواہ تبدیلی آئے گی مجھے معلوم ہے کہ غریب آدمی کو کن کن مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ہم نے  ان مسائل کو نہ صرف سمجھا ہے بلکہ اس کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر مقابلہ کر رہے ہیں اور آنے والے دنوں میں اس میں خاطر کواہ تبدیلی محسوس ہو گی پہلے جب مجھ سے اسمبلی کے بارے میںسوال ہوا کرتے تھے آج اللہ کا فضل و کرم ہے کہ ہم نے 2013میں جو وعدہ کیا تھا آج وہ وفا ہوتا نظر آرہا ہے اور انشائ اللہ اگلے سال تقریباً بجلی کی لوڈ شیڈنگ زیرو ہو جائے گی اور 2018میں انشائ اللہ بجلی کے اس لوڈ شیڈنگ کے جن کو بوتل میں بند کر دیا جائے گا ہم مانتے ہیں لوگوں کو صحت کی سہولیات اس طرح میسر نہیں جس طرح ہونی چاہیں اس بارے میں لوگوں کو شکایات ہیں سی پیک کے تحت 45ارب روپے کی اقتصادی راہداری بن رہی ہے کوئلے کے کارخانے بن رہے ہیں موٹرویز بن رہی ہیں یہ بھی پاکستان کی ترقی میں سنگ میل ہیں اقتصادی راہداری پاکستان کی معاشرتی شہ رگ ہے پوری دنیا تسلیم کر رہی ہے کہ پاکستان کی معیشت مضبوط ہو رہی ہے کراچی کی رونقیں بحال ہو رہی ہے دہشتگردی ختم ہو رہی ہے اغوائ برائے تاوان کے واقعات کم سے کم ہو گئے ہیں دہشتگردی میں کمی واقع ہوئی ہے تاہم ابھی کچھ کسر باقی ہے انشائ اللہ اس کے مکمل خاتمے تک جنگ لڑیں گے اور پاکستانی قوم کی جیت ہو گی ایک سوال پر ا حمزہ شہباز شریف نے کہا کہ پاناما لیکس میں وزیر اعظم نے اپنے آپ کو احتساب کے لیے پیش کیا ہے انہوں نے عدالت عظمی کو خط لکھا کہ یہ کیس میں آپ کے حوالے کرتا ہوں اپنا مستقبل عدالت کو سونپتا ہوں ہم اور ہمارے بچے عدالت میں پیش ہو کر تمام ثبوت دیں گے یہ بات واضح ہے کہ جس کا دامن صاف نہیں ہوتا وہ کبھی اپنے آپ کو عدالت کے سامنے پیش نہیں کرتا عمران خان جو عدالت کے کٹہرے سے گھبراتے ہیں وہ آپ کے دائیں بائیں کھڑے ہو تے ہیں جنہوں نے کروڑوں کے قرضے معاف کرائے ہیں آپ کی اپنی آف شور کمپنی ہے آ پ نے کے پی کے میں احتساب کمیشن کا جو حال کیا سب جانتے ہیں جن وزرائ کو آپ نے کرپشن کے تحت نکالا ضرورت کے تحت انہیں دوبارہ وزیر بنا دیا بلدیاتی انتخابات میں آپ کے وزیر ڈبے اٹھا کر لے جاتے ہیں آپ کا دوغلہ پن ہے کبھی آپ دھرنے کرتے ہیں کبھی شہروں کو بند کرتے ہیں ٹانگیں کھینچنے کا دور ختم ہو چکا ہے عوام ترقی چاہتے ہیں جو حقیقتاً سی پیک بجلی کے کارخانوں موٹرویز کی شکل میں ہو ر ہی ہے انشائ اللہ2018میں  ایک خوشحال پاکستان کے ساتھ ہم پاکستانی عوام کے پاس جائیں گے عمران خان  آپ ہوش کے ناخن لیں اور میڈیا پر جو اخلاق کی دھجیاں اڑائی جا رہی ہیں اور بھانت بھانت کی بولیاں جا رہی ہیں لوگ ان سب چیزوں کو دیکھ رہے ہیں آپ کی سیاست جو انتشار کی سیاست ہے اگر لوگ اس پر کان دھرتے تو آج آپ کے دھرنے میں دس لاکھ لوگ آئے جو نہیں آئے آپ کے کارکن بنی گالہ کے باہر پولیس سے مقابلہ کر رہے تھے اور آپ بنی گالہ میں کافی پی رہے تھے آپ میں اتنی اخلاقی جرآت نہ تھی کہ آپ اپنے کارکنوں کے ساتھ کھڑے ہوئے لیڈر ایسے نہیں بنا کرتے دھرنوں اور کنٹینروں پر الزام تراشیوں سے لوگ راتوں رات وزیر اعظم نہیں بنا کرتے۔


مزید خبریں

عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟