مالک مکان سے تنگ طالبہ ٹرین میں رہنے پر مجبور

اپنا گھر  ہر انسان کی خواہش  ہوتی ہے  جہاں وہ سکون سے اپنی زندگی گزار سکے کیونکہ کرائے کے گھروں میں ہر روز مالک مکان کی نئی شرائط اور نت نئے مطالبات زندگی میں بے سکونی پیدا کر دیتے ہیں اور ایسی ہی صورتحال سے بچنے کیلئے جرمنی کی طالبہ نے ٹرین کو ہی اپنا گھر بنا لیا۔ 26 سالہ مولر نامی جرمن طالبہ کا فلیٹ کی مالکن سے چھوٹی سی بات پر ہونیوالا تنازعہ اس قدر شدت اختیار کر گیا کہ اسے مجبوراً گھر چھوڑنا پڑا جس کے بعد مولر نے گھر کرائے پر نہ لینے کا فیصلہ کیا اور ٹرین کی سال بھر کی ٹکٹ خرید کر ٹرین ہی کو اپنا گھر بنا لیا ، جہاں وہ اپنے کپڑوں، لیپ ٹاپ، کتابیں اور دیگر ضرورت کی اشیا کیساتھ سکون سے رہتی ہیں۔ طالبہ نے کہا ہے کہ وہ ٹرین میں بہت خوش و خرم زندگی گزار رہی ہیں اور ٹرین میں انہیں بالکل اپنے گھر کی طرح محسوس ہوتا ہے اور وہ جب چاہیں اپنے رشتہ داروں اور دوستوں سے مل سکتی ہیں، جبکہ ساتھ ہی مختلف مقامات کا سفر کر کے لطف اندوز بھی ہوتی ہیں۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟