21 ستمبر 2018
تازہ ترین
لہو جوسرحد پر بہہ رہا ہے ہم اس لہو کا حساب لیں گے،آرمی چیف

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا ہے کہ دفاع پاکستان کے لیے ہم سب یکجاں ہیں۔پاک فوج کے جنرل ہیڈ کوارٹر (جی ایچ کیو) میں یوم دفاع پاکستان کی مرکزی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ 6 ستمبرملکی تاریخ کا اہم دن ہے، آج کا دن شہدا پاکستان سے یکجہتی کا دن ہے،انہوں نے کہا کہ 1965 اور 1971 کی جنگ سےہم نےبہت کچھ سیکھا ہے، ہماری افواج اور قوم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں قربانیاں دی ہیں، ہمارے گھروں، اسکولوں، ملکی قائدین پر حملے کیے گئے، ہمیں اندر سے کمزور کرنے کی کوشش کی گئی۔آرمی چیف نے کہا کہ دہشت گردی کے ناسور کا مل کرمقابلہ کیا، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں 70 ہزار سے زائد پاکستانی شہید اور زخمی ہوئے، زندہ قومیں اپنے شہداء کو نہیں بھولتیں۔جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ لہو جوسرحد پر بہہ رہا ہے ہم اس لہو کا حساب لیں گے، دو دہائیوں میں بہت مشکل دور سے گذرے ہیں، جنگ ابھی جاری ہے۔آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ جمہوریت کا تسلسل ضروری ہے میں مقبوضہ کشمیر کے بھائیوں کو سلام پیش کرتا ہوں

جی ایچ کیو میں یوم دفاع پاکستان کی مرکزی تقریب ہوئی جس میں وزیراعظم عمران خان اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سمیت سیاسی وعسکری قیادت شریک ہوئے۔ نجی ٹی وی کے مطابق پاک فوج کے جنرل ہیڈ کوارٹر (جی ایچ کیو) میں یوم دفاع پاکستان کی مرکزی تقریب ہوئی جس میں وزیراعظم پاکستان عمران خان، وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی، وزیردفاع پرویز خٹک، وزیرخزانہ اسد عمر، تینوں مسلح افواج کے سربراہان سمیت سیاسی وعسکری قیادت شریک  ہوئے ۔یوم دفاع کی تقریب میں اپوزیشن رہنماؤں نے بھی بڑی تعداد میں شرکت کی جن میں مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف اور پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سمیت دیگر رہنما شامل ہوئے، جب کہ تقریب میں کھلاڑی اور فنکار بھی شریک تھے


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟