12 نومبر 2018
 قومی ٹیم کی وطن واپسی کی تیاریاں

 زمبابوے میں کلین سویپ کی اونچی اڑان کے بعد قومی شاہینوں نے وطن واپسی کا سفر شروع کر لیا، دبئی کے بعد تمام کھلاڑی و آفیشلز اپنے اپنے شہر پہنچیں گے، مرد میدان بلکہ فخر پاکستان فخر زمان کی پشاور آمد ہو گی۔ زمبابوے کے خلاف پانچ ون ڈے میچز کی سیریز میں وائٹ واش کے بعد قومی کھلاڑی فاتح قرار پائے، پانچویں ون ڈے میں قومی ٹیم ایک سو اکتیس رنز سے فاتح بنی، پہلے کھیلتے ہوئے تین سو چونسٹھ رنز سکور کئے، میزبان زمبابوین دو سو تینتیس رنز تک محدود رہے۔ ون ڈے کرکٹ میں تیز ترین ہزار رنز مکمل کرنے کے ریکارڈ ہولڈر فخر زمان نے آخری میچ میں پچاسی رنز سکور کئے۔ سیریز میں سب سے زیادہ پانچ سو پندرہ سکور کا ایک اور عالمی کارنامہ انجام دے کر مین آف دی سیریز کا اعزاز پایا۔ ٹورنامنٹ میں امام الحق نے سیریز کی تیسری اور کیرئر کی چوتھی سنچری سکور کی، پہلے نو ون ڈیز میں یہ معرکہ سر کرنے کا عالمی ریکارڈ قائم کر ڈالا۔ بابر اعظم نے بھی تگڑہ سینکڑہ سکور کیا اور ایک سو چھ رنز پر ناقابل شکست رنز بنائے، اس اہم میچ میں بابر اعظم مین آف دی میچ قرار پائے، چوالیس اننگز میں تھری فگر اننگز سے دنیا کے نمبر ٹو بیٹسمین بھی بن گئے، اس شاندار بلکہ یادگار جیت پر کپتان سرفراز خوشی سے نہال نظر آتے ہیں۔ قومی ہیروز کامیاب دورے کے بعد واپسی کی تیاریوں میں مصروف ہیں، دبئی میں قیام کے بعد اپنے اپنے شہر لاہور، اسلام آباد، کراچی اور سیالکوٹ جبکہ فخر پاکستان ، فخر زمان پچیس جولائی کو  پشاور پہنچیں گے۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟