قومی اسمبلی، اپوزیشن جماعتوں کا علامتی واک آئوٹ

ڈپٹی سپیکر اور وزیر پارلیمانی امور شیخ آفتاب اپوزیشن جماعتوں کے اراکین کو واپس ایوان میں لے آئے

 قومی اسمبلی کے اجلاس میں لوڈشیڈنگ کے حوالے سے حکومت کی جانب سے دی جانے والی تفصیلات پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے اپوزیشن جماعتوں نے علامتی واک آئوٹ کیا، ڈپٹی سپیکر جاوید مرتضی ٰ عباسی نے وفاقی وزیر پارلیمانی امور شیخ آفتاب کو منا کر لانے کی ہدایت دی۔ کچھ دیر بعد اپوزیشن جماعتوں کے اراکین واپس ایوان میں آئے اور کارروائی معمول کے مطابق شروع ہوگئی۔  قومی اسمبلی کے اجلاس میں وقفہ سوالات کے دوران وفاقی وزیر قانون زاہد حامد نے کہا ہے کہ ججز کی تقرری کے لئے متعلقہ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کی جانب سے نام جوڈیشل کمیشن میں آتا ہے، خواتین ججز یا فاٹا سے ججز کی تقرری کےلئے کوئی مخصوص کوٹہ نہیں ہے  ۔ انہوں نے کہا ہے کہ قومی احتساب بیورو کسی بھی کیس میں مزید شواہد کے لئے احتساب عدالت سے سرچ وارنٹ حاصل کرتی ہے اور جوڈیشل آفیسر اور جوڈیشل مجسٹریٹ کے ہمراہ چھاپہ مار کے برآمد ہونے والی چیزیں ریکوری میمو پر درج کرتی ہے اور کرپشن کی تمام رقوم قومی خزانے میں جمع کرائی جاتی ہیں  ، متفقہ قرارداد اس ایوان نے پاس کی، سینیٹ نے بھی قرارداد پاس کی اور ایک کمیٹی قائم کی گئی ہے جو نیب لائ کا کلاز وائز جائزہ لے رہی ہے، کرپشن کی تعریف اور سزا پر نظرثانی کی جارہی ہے، دونوں ایوانوں میں اتفاق رائے سے قانون لایا جائے۔ وفاقی پارلیمانی سیکرٹری برائے توانائی اظہر قیوم ناہرہ نے کہا ہے کہ دسمبر 2017 کے آخری ہفتے میں بجلی کی یومیہ اوسط پیداوار  18678 اور طلب 12625 میگاواٹ، انتہائی حد 20988 میگاواٹ اور طلب 16650 میگاواٹ ہوگی ۔  وزیر مملکت برائے انسانی حقوق ممتاز احمد تارڑ نے کہا ہے کہ برما کے مسلمانوں کے ساتھ جو بربریت کا سلوک کیا جارہا ہے اس کی جتنی مذمت کی جائے وہ کم ہے، جو ظلم برپا کیا جارہا ہے وہ المناک مناظر ہیں، عالمی یوم انسانی حقوق 10 دسمبر کو بھرپور انداز سے منائیں گے، انسانی حقوق کے لئے وزارت نے آگاہی مہم شروع کی ہے جس کی منظوری وزیراعظم نے دی ہے۔  وزیر مملکت برائے مواصلات جنید انوار نے کہا ہے کہ موٹر ویز پر ای ٹکٹنگ سسٹم  بے ضابطگیوں کو ختم کرنے کے لئے شروع کیا جارہا ہے بہت جلد اسے رائج کر دیا جائے گا،  ایم نائن موٹر وے پر کام مزید تیز کرنے کی ہدایت دیدی ہے، بہت جلد ایم نائن پر جاری کام کا جائزہ لینے کیلئے خود دورہ کروں گا ، نیشنل ہائی ویز اور موٹر وے پولیس نے ڈرائیونگ کی تربیت بھی شروع کردی ہے ، موٹر وے ایم ون،  ایم ٹو، ایم تھری اور ایم فور اور ہائی ویز ایم فائیو پر ای ٹکٹنگ سسٹم آزمائشی بنیادوں پر متعارف کرایا گیا ہے بہت جلد تمام موٹر ویز پر یہ سسٹم رائج کر دیا جائے گا، موٹر ویز پر ای ٹکٹنگ سسٹم  بے ضابطگیوں کو ختم کرنے کے لئے شروع کیا جارہا ہے بہت جلد اسے رائج کر دیا جائے گا۔  


عوامی سروے

سوال: آپ کے خیال میں کونسی سیاسی یا مذہبی جماعت صحیح معنوں میں نظریہ پاکستان کی محافظ اور عوامی فلاح و بہبود میں اہم کردار ادا کر سکتی ہے؟