15 نومبر 2018
 فون کی عادت ختم کرنے والا ٹیبلٹ کھلونا

 تقریباً تمام والدین اپنے بچوں میں ٹیبلٹ اور  سمارٹ فون سے گھنٹوں کھیلتے رہنے کی عادت سے شدید پریشان ہیں۔ اب بچوں کی اس خراب لت کو دور کرنے کے لئے ایک انٹرایکٹو ہارڈویئر گیم بنایا گیا ، جسے پلگو کا نام دیا گیا۔ ماہرین خبردار کرچکے ہیں کہ سمارٹ فون اور ٹیبلٹ سے خارج ہونے والی بلیو لائٹ آنکھوں کے ان خلیات کو ناقابل تلافی نقصان پہنچاتی ہے جو روشنی جذب کرنے اور دیکھنے میں مددگار ہوتے ہیں۔ اسی بنا پر بچوں کی نازک بینائی ان آلات سے شدید متاثر ہوسکتی ہے۔ لے شائفو نامی کمپنی نے پلگو گیم تیار کیا ہے جو  لیگو کی طرح چند ٹکڑوں، ایک پلیٹ فارم اور ٹیبلٹ پر مشتمل ہے جسے تعلیمی اور سیکھنے سکھانے کے عمل میں استعمال کیا جاسکتا ہے۔ دوسری اچھی بات یہ ہے کہ پلگو بچوں کو براہ راست ٹیبلٹ کو دیکھنے سے بھی روکتا ہے۔ اس گیم کے لئے بہت سے کنٹرولرز بھی بنائے گئے ہیں۔ جب بچے ٹیبلٹ کے سامنے کھلونے رکھتے ہیں تو وہ  سکرین پر انٹریکٹو انداز میں ظاہر ہوتا ہے۔ بچے سکرین کو دیکھتے ہوئے سادہ تجربات، آلات اور کھلونے تیار کر سکتے ہیں۔ پلگو پانچ سے لے کر گیارہ برس تک کے بچوں کےلئے تیار کیا گیا۔ اس میں ایک گیم پلگو سٹیر ہے جس میں بچے کار کے پلاسٹک ہینڈل استعمال کرتے ہوئے سکرین پر گاڑی دوڑا سکتے ہیں۔ اس کے علاوہ کھیل کھیل میں ریاضی اور جیومیٹری کے بہت سے تجربات بھی انجام دیئے جاسکتے ہیں۔ اس کے علاوہ زبان سیکھنے اور نئے الفاظ جاننے کیلئے بھی کئی معاون گیم بنائے گئے ہیں۔ دوسری جانب یہ گیم آگمینٹڈ ریئلٹی میں بھی کھیلنے کی سہولت فراہم کرتا ہے۔ اس میں دماغی کھیل بھی موجود ہیں جو بچوں کی تخلیقی صلاحیتوں کو بڑھاتے ہیں۔ اگلے سال مارچ میں پلگو فروخت کیلئے پیش کر دیا جائے گا اور اس کی قیمت 35 سے 99 ڈالر کے درمیان ہوگی جو مختلف گیمز کے حوالے سے ہوگی۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟