19 جنوری 2019
تازہ ترین
فلم کا نام تبدیل،عمران ہاشمی سنسر بورڈ پربرہم

نامور بالی ووڈ اداکار عمران ہاشمی نے اپنی فلم چیٹ انڈیا کا نام تبدیل کے جانے پر بھارتی سنسر بورڈ کے فیصلے کو مضحکہ خیز قرار دے دیا۔ بھارتی تعلیمی نظام میں موجود خرابیوں اور کرپشن سے متعلق بنائی گئی فلم ٴچیٹ انڈیاٴ ان دنوں اپنے منفرد موضوع کے باعث خبروں میں ہے، فلم میں عمران ہاشمی نے مرکزی کردار ادا کیا ہے جب کہ فلم کے پروڈیوسر بھی وہ خود ہی ہیں۔ عمران ہاشمی اپنی فلم کو لےکر بہت پرامید ہیں کہ یہ فلم شائقین کے معیار پر پوری اترے گی، تاہم بھارتی سنسر بورڈ نے ریلیز سے محض ایک ہفتے قبل فلم کا نام تبدیل کرکے عمران ہاشمی کے غصے کو ہوا دے دی ہے۔ اداکار عمران ہاشمی نے بھارتی سنسر بورڈ پر برستے ہوئے اس فیصلے کو مضحکہ خیز اور غیر منطقی ٟ بے تکا ٞ قرار دے دیا۔ انہوں نے کہا سنسر بورڈ نے الزام لگایا ہے کہ فلم کے نام کی وجہ سے بھارت کا منفی تاثر ابھر رہا ہے لیکن انہیں سمجھنا چاہئے کہ ہم جو دکھا رہے ہیں وہی نظام کا آئینہ ہے۔ عمران ہاشمی نے غصے سے کہا ہماری فلم کا ٹائٹل گزشتہ ایک برس پہلے فائنل ہوگیا تھا سنسر بورڈ نے اسی نام کے ساتھ تمام ٹریلرز اور پروموز کو منظوری بھی دے دی تھی تو اب کیا ہوگیا۔ عمران ہاشمی نے کہا اب شائقین سمجھدار ہوگئے ہیں وہ فلم کو اس کی کہانی سے جج کرتے ہیں، شائقین  فلم کے مواد کو دیکھنے آتے ہیں نا کہ ٹائٹل کو، مجھے یقین ہے فلم کے ٹائٹل کی تبدیلی اس کے مواد اور موضوع پر اثر انداز نہیں ہوگی۔ واضح رہے کہ فلم ٴ وائے چیٹ انڈیاٴ پہلے 25 جنوری کو ریلیز کی جانی تھی لیکن شیوسینا کی دھمکی کے بعد اب مقررہ تاریخ سے ایک ہفتہ قبل 18 جنوری کو ریلیز کی جائے گی۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟