12 نومبر 2018
طلال چوہدری نے توہین عدالت کیس میں نااہلی کا فیصلہ چیلنج کر دیا

ن لیگی رہنما طلال چوہدری نے توہین عدالت کیس میں نااہلی کا فیصلہ چیلنج کر دیا۔ اپیل میں استدعا کی گئی ہے کہ فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے، الزام ثابت کیے بغیر سزا دے دی گئی۔ توہین عدالت کیس میں سزا یافتہ ن لیگی رہنما طلال چوہدری کی جانب سے نااہلی کا فیصلہ چیلنج کر دیا گیا۔ سپریم کورٹ میں کامران مرتضیٰ ایڈووکیٹ کے ذریعے دائر درخواست میں طلال چوہدری نے مؤقف اختیار کیا کہ الزام ثابت کیے بغیر سزا دے دی گئی، کیس میں شواہد کا درست انداز میں جائزہ نہیں لیا گیا۔ عدالت نے استغاثہ کے مؤقف کو اہمیت دی لیکن دفاع کا مؤقف نظر انداز کیا۔ استغاثہ کیخلاف مواد کے باوجود بھی درخواست گزار کو شک کا فائدہ نہیں دیا گیا۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ فیصلے کو کالعدم قرار دینے کیلیے بے قاعدگیاں موجود ہیں۔ عدالت سزا کیخلاف اپیل منظور کرکے فیصلہ کالعدم قرار دے۔ سپریم کورٹ نے 2 اگست کو طلال چوہدری کو 5 سال کیلیے نااہل قرار دیا تھا۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟