17 نومبر 2018
تازہ ترین
  شمالی سوڈان،کشتی الٹنے سے سکول کے 22 بچے جاں بحق

شمالی سوڈان میں بچوں کو لے کر اسکول جانے والی کشتی الٹنے سے 22 بچے جاں بحق ہو گئے  ۔ بد قسمت کشتی بچوں کو لے کر اسکول جا رہی تھی کہ راستے میں شدید بارشوں اور طوفانی ہوائوں کی وجہ سے کشتی کا انجن خراب ہوگیا،  کشتی میں 40 افراد سوار تھے۔ حادثہ دارالحکومت خرطوم سے 750 کلومیٹر دور ملک کے شمالی خطے میں دریائے نیل میں پیش آیا۔ ایک نیوز ایجنسی کے مطابق جاں بحق ہونے والوں میں ایک خاتون بھی شامل ہے، سول ڈیفنس کے اہلکار ابھی تک دریائے نیل میں ڈوبنے والے افراد کی لاشیں تلاش کر رہے ہیں، اس علاقے کے دیہات کے افراد عموماً دریائے نیل عبور کرنے کے لیے لکڑی کے تختوں سے بنی کشتیاں استعمال کرتے ہیں۔ شدید بارشوں کی وجہ سے بدھ  کے روز خرطوم میں حکومت نے ایک حکم نامے کے ذریعے ملک بھر کے اسکولوں کو  بند کرنے کا حکم  دیا تھا۔ سوڈان کے شمالی صوبوں دارفور اور کوردفان میں حالیہ بارشوں سے اب تک کم از کم 40 افراد  جاں بحق ہو چکے ہیں، دارالحکومت خرطوم میں بھی بارشوں سے 10 افراد لقمہ اجل بنے ہیں۔

 


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟