16 نومبر 2018
شارجہ ٹیسٹ؛ پاکستانی ٹیم پہلی اننگز میں 281 رنز بناکر آؤٹ

شارجہ کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلے جا رہے تیسرے ٹیسٹ میچ کے دوسرے دن پاکستان کی پوری ٹیم پہلی اننگز میں 281 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی ہے۔ دوسرے دن 8 کھلاڑیوں کے نقصان پر پاکستان نے کھیل کا آغاز کیا تو محمد عامر اور یاسر شاہ وکٹ پر موجود تھے تاہم قومی ٹیم کے کھلاڑی گزشتہ روز کے مجموعہ 255 میں صرف 26 رنز کا ہی اضافہ کرسکے اور آؤٹ ہوگئے۔اس سے قبل کھیل کے پہلے دن قومی ٹیم نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا،گرین کیپس کی جانب سے اننگز کا آغاز سمیع اسلم اور اظہر علی نے کیا تاہم پہلے ہی اوور میں اظہرعلی صفراور اسد شفیق بھی بغیر کھاتا کھولے پویلین لوٹ گئے۔ ایک رن پر دو وکٹیں گرنے کے بعد سمیع اسلم اور یونس خان نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور دونوں کے درمیان 106 رنز کی شراکت قائم ہوئی، 107 کے مجموعی اسکور پر یونس خان 51 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔سمیع اسلم 74 ،کپتان مصباح الحق 53، سرفراز احمد 51، محمد نواز6 اور وہاب ریاض 4 رنزبنا کر آؤٹ ہوئے۔ ویسٹ انڈیز کی جانب سے دوندرا بشو نے 4، شینن گبریل نے 3 اور روسٹن چیز نے ایک وکٹ حاسل کی۔قبل ازیں ٹاس جیت کر پاکستان کے کپتان مصباح الحق نے پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ وکٹ بہت ٹف ہے اور بولرز کو بہت محنت کرنا ہو گی تاہم آگے چل کر وکٹ اسپنرز کیلئے سازگار ہو سکتی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ٹیم میں 2 تبدیلیاں کی گئی ہیں، محمد عامر اور وہاب ریاض کی واپسی ہوئی ہے جب کہ راحت علی اور سہیل خان کو باہر بٹھایا گیا ہے۔ ویسٹ انڈین قائد جیسن ہولڈر کا کہنا تھا کہ اب تک سیریز بہت مشکل ثابت ہوئی ہے لیکن کوشش ہو گی کہ سیریز کا اختتام اچھا ہو اس لئے میچ جیتنے کی بھرپور کوشش کریں گے۔واضح رہے کہ تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں پاکستان کو ویسٹ انڈیز پر 2 صفر کی واضح برتری حاصل ہے اور اگر پاکستان تیسرا ٹیسٹ بھی جیتنے میں کامیاب ہو جاتا ہے تو ٹی ٹوئنٹی اور ون ڈے کے بعد ٹیسٹ میں بھی ویسٹ انڈیز کو وائٹ واش کرنے میں کامیاب ہو جائے گا۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟