23 ستمبر 2018
تازہ ترین
سیمنٹ انڈسٹری کی شرح نمو 5.10فیصد ریکارڈ

رواں مالی سال کے پہلے ماہ جولائی میں بھی سیمنٹ انڈسٹری میں شرح نمو کا رجحان برقرار رہا ، جبکہ گزشتہ مالی سال جو 30 جون 2018 کو ختم ہوا انڈسٹری کے لئے کامیاب ترین سال ثابت ہوا تھا۔ انتخابات کی سرگرمیوں کے باوجود جولائی میں شرح نمو 5.10 فیصد ریکارڈ کی گئی۔ نئے مالی سال کے آغاز پر مقامی فروخت اور برآمدات دونوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ جولائی 2018 میں مجموعی کھپت 3.554 ملین ٹن ریکارڈ کی گئی جو گزشتہ برس کے مقابلے میں 5.10 فیصد زیادہ ہے۔ گزشتہ سال جولائی 2017 میں مجموعی کھپت 3.382 ملین ٹن تھی۔ عام طور سے انتخابی سرگرمیوں کی وجہ سے معاشی اور تعمیراتی سرگرمیاں متاثر ہوتی ہیں اور ملازمین ووٹ ڈالنے کے لئے اپنے آبائی حلقوں میں جاتے ہیں، تاہم اس کے باوجود شرح نمو میں اضافہ متاثر نہیں ہوا جو اس بات کا مظہر ہے کہ سیمنٹ اور تعمیری صنعت ترقی کی جانب رواں دواں ہے اور مستقبل میں بھی یہ رجحان برقرار رہنے کی امید ہے۔ جولائی 2018 میں برآمدات میں 9.25 فیصد اضافہ ہوا جو جولائی 2017 میں 0.476 ملین ٹن تھی اور گزشتہ ماہ 0.520 ملین ٹن رہیں۔ اسی طرح مقامی کھپت میں 4.42 فیصد اضافہ ہوا ، جو گزشتہ سال 2.906 ملین ٹن تھی اور رواں مالی سال جولائی 2018 میں 3.035 ملین ٹن ہوگئیں۔ برآمدات میں ہونے والا اضافہ اگرچہ مسلسل نوعیت کا ہ،ے تاہم اس کا حجم کم ہے۔ اسی طرح مقامی کھپت میں اضافہ اگرچہ کم ہے لیکن مقدار حجم فروخت کے لحاظ سے زیادہ ہے۔ برآمدات میں اضافہ اس لئے بھی خوش آئند ہے کیونکہ 2008 تا 2017 کے دوران مسلسل کمی واقع ہورہی تھی۔ برآمدات میں کچھ مہینے قبل اضافہ ہونا شروع اور یہ تسلسل جولائی 2018 تک برقرار ہے۔ بحری راستے برآمدات میں ہونے والا اضافہ 133.71 فیصد ہے جو سال 2017 جولائی میں 0.144 ملین ٹن تھا اور اب بڑھ کر جولائی 2018 میں 0.336 ملین ٹن ہوگیا، لیکن یہ اضافہ افغانستان اور بھارت سیمنٹ کی برآمدات میں کمی کی وجہ سے زیادہ کارآمد ثابت نہیں ہوا اور ان ملکوں کو برآمدات میں کمی اسی عرصے کے دوران بالترتیب 44.88 فیصد اور 44.43 فیصد ریکارڈ کی گئی۔ اس طرح گزشتہ سال کے مقابلے میں رواں مالی سال جولائی 2018 میں برآمدات میں مجموعی طور پر 9.25 فیصد اضافہ ہوا۔


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟