13 نومبر 2018
سرائیل نے یونیسکوسے تمام روابط منقطع کردیئے

یونیسکو میں عرب ممالک کی جانب سے پیش کی گئی ایک قرارداد منظور کرلی گئی ہے۔ قراردادمیں مقبوضہ بیت المقدس میں یہودیوں کا کوئی ذکر نہ کرنے پراسرائیل کو سخت اعتراض ہے اوراسرائیل نے جوابی طورپریونیسکو سے تمام رابطے منقطع کردیئے ہیں۔اسرائیل کا کہنا ہے کہ قرارداد میں بیت المقدس کو صرف اسلامی ناموں سے پکارا گیا جبکہ یہ جگہ یہودیوں کا بھی مقدس ترین مقام ہے اور وہ اسے ٹمپل ماؤنٹ کہتے ہیں۔یونیسکو نے اسرائیل کے مقبوضہ بیت المقدس میں کردارپربھی تنقید کی ہے جس پراسرائیل بہت سیخ پا ہے اور اسے سیاست سے متاثر قرار دے رہا ہے۔ قرارداد میں بار بار قوت کے استعمال،مسلمانوں پر پابندی عائد کرنے اور آثار قدیمہ کے 


عوامی سروے

سوال: کیا پی ٹی آئی انتخابات سے قبل کیے گئے وعدے پورے کر پائے گی؟